پاکستان کو بڑا جھٹکا:یو این ایس سی میں چین نے دیا ہندوستان کا ساتھ

Share Article
china-unsc
حملوں کے لئے مجرم لوگوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کی ضرورت ہے
چین جو ہمیشہ سے ہی ہندوستان پر سفارتی دباؤ بنانے کے لئے پاکستان کا سپورٹ کرتا ہے وہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) میں پلوامہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے جو ریزولیوشن منظور کیا ہے اس میں چین نے پاکستان کا ساتھ چھوڑتے ہوئے بھارت کی حمایت کی ہے۔ اس ریزولیوشن میں جیش محمد کا بھی ذکر تھا۔ ہندوستان نے آج تک جب بھی بین الاقوامی فورم پر جیش محمد سرغنہ مسعود اظہر کو بین الاقوامی دہشت گرد قرار دینے کا مسئلہ اٹھایا ہے تب تب چین نے اس کی مخالفت کی۔ بتا دیں کہ چین اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے پانچ مستقل ارکان میں سے ایک ہے تو اس کے پاس ویٹو کا پاور ہے اور اسی ویٹو کے پاور کے دم پر وہ ہمیشہ سے ہی مسعود اظہر کو بچاتا رہا ہے۔
لیکن پلوامہ حملے کے بعد چین کایہ ایک بڑا قدم ہے۔ دراصل، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) نے پلوامہ میں کئے کئے گئے حملے کی سخت مذمت کرتے ہوئے اسے بھیانک اورخطرناک کہا ہے۔ساتھ ہی اس حملے کی سازش کرنے والوں، منتظمین اور اسپانسرز کے خلاف کارروائی کی اپیل کی ہے۔ خاص بات یہ ہے کہ سلامتی کونسل نے جو ریزولیوشن منظور کیا اس میں دہشت گرد تنظیم جیش محمد کا بھی ذکر کیا گیا تھا۔ UNSC نے کہا کہ حملوں کے لئے مجرم لوگوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کی ضرورت ہے۔ UNSC نے کہا کہ حملوں کے لئے مجرم لوگوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کی ضرورت ہے۔
آپ کو بتادیں کہ پلوامہ حملے کے بعد ہندوستان دہشت گردی کو لے کر پاکستان پر بین الاقوامی دباؤ بڑھ رہا ہے۔ دنیا کے تقریباً تمام طاقتور ممالک نے پلوامہ حملے کو لے کر پاکستان پر تنقید کی ہے۔جمعرات کو پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے قومی سلامتی کمیٹی کی میٹنگ لی۔ اس میٹنگ میں کئی بڑے فیصلے لئے گئے ہیں۔پاکستانی ویب سائٹ ’ڈان‘کے مطابق پاکستان نے دہشت گرد تنظیم جماعت الدعوی پر پابندی لگائی ہے، اس کے ساتھ ہی فلاح انسانیت پر بھی پابندی عائد کی ہے،جس طرح پاکستان حکومت کا رویہ ہے اس سے صاف جھلکتا ہے کہ پاکستان حکومت پر دہشت گردی کس قدر غالب ہے، کہ پاکستان حکومت خود سے کوئی فیصلہ نہیں لے سکتی۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *