ماب لنچنگ پربی جے پی لیڈرونے کٹیارکا متنازعہ بیان، جانئے کیاکہا

Share Article
vinay-katiyar
گؤرکشاکے نام پرالورمیں رکبرخان کے قتل پرجہاں سیاست ہورہی ہے ۔وہیں ایک سے ایک بڑھ متنازعہ بیان آرہے ہیں۔اب بی جے پی لیڈر وسابق رکن پارلیمنٹ ونے کٹیار نے ماب لنچنگ کولیکرمتنازعہ بیان دیاہے۔ونے کٹیارکاکہناہے کہ مسلمان گائے کوچھونے سے پہلے کئی بارسوچیں۔یہ اس ملک میں کروڑوں لوگوں کے جذبات کا سوال ہے۔ایک اخبارسے بات کرتے ہوئے ونے کٹیارنے کہاکہ اگرمسلمانوں نے گائے ذبح کرنابندنہیں کیاتو ماب لنچنگ کے واقعات میں اضافہ ہوتارہے گا۔انہوں نے کہاکہ گائے قتل کولیکرگائے کی پوجا کرنے والے لوگ بیدار ہوتے جارہے ہیں،اسلئے اب مسلمانوں کواب لوگوں کے جذبات کوسمجھنا ہوگا۔انہوں نے صاف طورپرکہاکہ اگرگائے ذبح کرنا بندنہیں ہواتوماب لنچنگ کے واقعات ہوتے رہیں گے۔ونے کٹیارکا کہناہے کہ جس طرح ماب لنچنگ کوجائزنہیں ٹھہرایاجاسکتا ، اسی طرح گؤذبح کرنا بھی قطعی جائزنہیں ہے، کیونکہ اس سے کروڑوں لوگوں کے جذبات جڑی ہوتی ہیں۔ان کا کہناہے کہ گؤذبح پرچپ نہیں رہاجاسکتا۔انہوں نے کہاکہ لنچنگ پرجولوگ سوال اٹھاتے ہیں، گؤذبح پران کی خاموشی ٹھیک نہیں ہے۔
خیال رہے کہ وہیں راجستھان کے بی جے پی رکن اسمبلی گیاندیو اہوجا نے راجستھان پولس پرسوال کھڑے کئے ہیں، انہو ں نے کہاکہ ان کے حامیوں نے رکبرخان کودو-چارتھپڑمارکر پولس کوسونپ دیاتھا، اس کے بعد پولس نے کیا کیاوہ نہیں جانتے ۔اس سے قبل مرکزی وزیر ارجن رام میگھوال نے متنازعہ بیان دیتے ہوئے کہاتھاکہ جیسے جیسے وزیراعظم نریندمودی کی مقبولیت میں اضافہ ہوگا ،اس طرح واقعات ہوں گے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *