نہیں مل رہے ہیں بھگوان شنکر اور ہنومان، اس خط نے اڑائے ڈاک محکمہ کے ہوش

Share Article

up-basti-letter

جس ملک میں بھگوان کے نام پر سیاست ہوتی ہے اور ہنومان جی پینکارڈ سوشل میڈیا پر سرخیاں بٹورتا ہے، اس ملک میں اگر ڈاکیہ بھگوان کا پتہ پوچھے تو تعجب کی بات نہیں ہونی چاہئے، ہو سکتا ہے بھگوان کے کسی روایتی بھکت نے جذبے میں آکر یہ حرکت کر دی ہو۔

دراصل اترپردیش کے بستی میں ایک عجیب معاملہ سامنے آیا ہے۔ بستی دبولیا بازارمیں بھگوان شنکر اوربھگوان ہنومان کے نام سے آئی ایک رجسٹری نے علاقے کے پوسٹ مین کو پریشان کر رکھا ہے۔ پوسٹ مین کو نہ تو دونوں بھگوان مل رہے ہیں اور نہ ہی رجسٹری لینے کو کوئی تیار ہے۔ اس رجسٹری پر مرسل کا نام پر عدالت ایف ٹی سی لکھا ہے۔

ہفتہ کو ایک رجسٹری لے کر ڈاکیہ بازار کے ہی ہنومان مندر پر پہنچا اور پجاری سے اسپیڈ پوسٹ لینے کو کہا۔ پجاری نے اس رجسٹری کو ریسیو کرنے سے صاف انکار کر دیا۔ دبولیا بازار میں ہنومان گڑھی مندر تو ہے لیکن ان دونوں نام سے کوئی نہ تو پجاری پہلے رہا اور نہ ہی بازار میں کوئی شخص ہی رہتا ہے۔ مندر کے پجاری کنہیا داس نے کہا کہ یہاں پر کملا پرساد نام کا کوئی شخص نہیں رہتا ہے، ایسے میں ہو سکتا ہے کہ کسی سازش کے تحت رجسٹری بھیجی گئی ہو۔

وہیں ہیڈ پوسٹ ماسٹر نے کہا کہ جس نام سے رجسٹری آئی ہے اس نام کے شخص کو دو دن اور تلاش کیا جائے گا۔ اس کے بعد عمل کے تحت اس رجسٹری کو واپس بھیج دیا جائے گا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *