دوسری کے لئے پہلی بیوی کو دیے تین طلاق

Share Article

تین طلاق سے متعلق کر مرکزی حکومت کے ذریعہ سخت قانون نافذ کئے جانے کے بعدبھی ضلع سے مسلسل تین طلاق کے واقعات کے نئے نئے معاملے سامنے آ رہے ہیں۔ تازہ معاملہ سرورپر تھانہ علاقہ کا ہے جہاں ایک نوجوان نے دوسری شادی رچانے کے لئے پانچ بچوں کی ماں اپنی پہلی بیوی کو خواتین تھانے کے سامنے ہی تین طلاق دے ڈالے۔ جمعرات کو متاثرہ نے ایس ایس پی آفس میں فریاد لگاتے ہوئے ملزم کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا۔

منڈالی رہائشی عائشہ کے مطابق اس کا نکاح تقریباً 15 سال پہلے سرورپر تھانہ علاقہ کے ہرا رہائشی عمران کے ساتھ ہوا تھا۔ عائشہ نے بتایا کہ موجودہ وقت میں ان کے پانچ بچے ہیں۔ خاتون کا الزام ہے کہ جہیز کی مانگ کو لے کر اس کے شوہر عمران اور سسر یونس گزشتہ کئی سالوں سے اس پرظلم و ستم کر رہے ہیں۔ مخالفت کرنے پر عمران سنجیدہ نام کی ایک عورت سے دوسری شادی کرنے کی بات کہتا تھا جس کی وجہ سے عائشہ نے کچھ وقت پہلیخاتون تھانے میں شکایت درج کرائی تھی۔ الزام ہے کہ عمران نے اس کے چاروں بچوں کو چھین کر اسے گھر سے نکال دیا۔ اس کے بعد گزشتہ 25 اگست کو جب وہ خاتون تھانے سے واپس لوٹ رہی تھی تو تھانے کے سامنے ہی عمران نے اسے تین طلاق دے دیا۔ متاثرہ نے جمعرات کو ایس ایس پی آفس پہنچ کر حکام سے معاملے کی شکایت کرتے ہوئے ملزم شوہر کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *