کٹ منی پر مرکزی رپورٹ کی ترنمول پارلیمنٹ میں مخالفت کرے گی

Share Article

 

کولکاتہ، سرکاری منصوبوں کو عام لوگوں تک پہنچانے کے بدلے میں لی گئی رشوت یعنی’کٹ منی‘ کے مسئلے پر اب ترنمول کے ایم پیز پارلیمنٹ میں مخالفت کرنے والے ہیں۔ اس معاملہ میں ہفتہ کو ہی مرکزی وزارت داخلہ نے نئی ہدایت جاری کی ہے۔ اس میں ریاستی حکومت کو اس معاملے پر کارروائی کی ہدایت بھی دی گئی ہے اور اس کی رپورٹ بھی طلب کی گئی ہے۔ خاص بات یہ ہے کہ نئیہدایت وزیر داخلہ کے انڈر سکریٹری کے حوالے سے جاری کیا گیا ہے جسے ریاست کی حکمران پارٹی بہت زیادہ اہمیت نہیں دے رہی ہے۔

 

Image result for cut mini Trinamool will oppose in Parliament

اتوار کو ترنمول پارلیمانی پارٹی کے ایک رہنما نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ پیر کو پارلیمنٹ کے وقفہ صفر میں اس معاملے کو ہم لوگ اٹھائیں گے۔ بنیادی طور پر ایم پی سدیپ بنرجی کو اس کی ذمہ داری دی گئی ہے۔ دراصل کٹ منی کے معاملے پر قومیسطح پر ترنمول کانگریس اور مغربی بنگال حکومت کو بدنام کرنے کے لئے مبینہ طور پر بی جے پی نے اسے ہوا دینا شروع کیا ہے۔ مرکزی حکومت کے وزارت داخلہ کی جانب سے اس معاملے میں ہدایت جاری کرانا اور رپورٹ طلب کرنا بھی اسی کا حصہ ہے۔ مذکورہ لیڈر نے بتایا کہ مرکزی وزارت داخلہ کے انڈر سکریٹری کی جانب سے ہدایت جاری کرنے اور اس پر رپورٹ طلب کرنے کی بہت زیادہ اہمیت نہیں ہے۔ مذکورہ رہنما نے بتایا کہ پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس میں اب تک چار بار لوک سبھا میں اور چھ بار راجیہ سبھا میں مغربی بنگال کے امن وقانون کے معاملے کو بی جے پی کے ایم پیزاٹھا چکے ہیں۔ حالات اتنے بگڑ چکے تھے کہ لوک سبھا اسپیکر اوم بڑلا کو ایسے ممبران پارلیمنٹ کو پھٹکار لگاتے ہوئے کہنا پڑا تھا کہ پارلیمنٹ کو بنگال اسمبلی میں تبدیل نہیں کیا جائے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *