مودی حکومت کی پالیسیوں پر دگوجے نے اٹھائے سوال، کہا ٹرمپ سے سیکھو

Share Article

مدھیہ پردیش کے سابق وزیر اعلیٰ دگوجے سنگھ نے مودی حکومت کی پالیسیوں پر سوال اٹھاتے ہوئے وزیر اعظم سے اپنے دوست ٹرمپ سے سیکھنے کی صلاح دی ہے۔ انہوں نے اپنے ٹویٹ کے ساتھ جے رام رمیش کے ایک ٹویٹ کو بھی شیئر کیا ہے، جس میں آرسی پی معاہدے پر دستخط کو نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کے بعد مودی حکومت کا تیسرا جھٹکا بتایا گیا ہے۔

دگوجے سنگھ نے وزیر اعظم نریندر مودی پر اپنی شبیہ کو چمکانے کے لئے قومی مفادات کی قربانی دینے کا الزام لگایا ہے۔ انہوں نے منگل کے روز ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا ہے-’’بین الاقوامی سطح پر اپنی شبیہ بہتر بنانے کے لئے مودی بھارت کے مفادات سے سمجھوتہ کر رہے ہیں، کیا یہی قوم پرستی ہے؟۔ انہوں نے اپنے اگلے ٹویٹ میں لکھا ہے- ایک طرف ٹرمپ ہیں، جو امریکی صنعتوں اور کاروبار کے مفادات کی حفاظت کے لئے چین کے ساتھ ٹیکس وار لڑ رہے ہیں اور یہاں ان کے نام نہاد دوست مودی اس کے برعکس ہیں۔ مودی جی ذرا اپنے دوست سے کچھ سیکھئے‘‘۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *