انڈین یونین مسلم لیگ کے ایک وفد نے آج الیکشن کمیشن میں بھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی صدر امت شاہ کے خلاف انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کا معاملہ درج کرایا ہے۔ لیگ کا الزام ہے کہ امت شاہ نے اپنے کیرل دورے کے دوران انتخابی جلسوں سے خطاب کرتے ہوئے کیرل کو پاکستانی حصہ قرار دیا ہے۔ وفد کا کہنا ہے کہ امت شاہ نے ہندو ووٹوں کے پولرائزیشن کرنے کے لئے اس طرح کی بات کہی ہے، جوضابطہ اخلاق کی کھلی خلاف ورزی ہے۔
 
Image result for muslim league flag in kerala
 
وفد کی قیادت کر رہے لیگ کے قومی سکریٹری خرم عمر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے امت شاہ کے خلاف الیکشن کمیشن میں شکایت درج کرائی ہے۔ انہوں نے کہا کہ امت شاہ نے کیرل کے شہریوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچایاہے۔ کیرالا کے شہری امت شاہ کے اس بیان سے کافی دکھی ہیں، اور ان کے اندر امت شاہ کے اس بیان کو لے کر کافی غصہ بھی ہے۔ انہوں نے کہا کہ امت شاہ نے اپنی پارٹی کو سیاسی فائدہ پہنچانے کے لیے اور ہندو ووٹوں کا پولرائزیشن کرنے کے لئے یہ بات کہی ہے، جو انتخابی ضابطہ اخلاق کی کھلی خلاف ورزی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ہم نے الیکشن کمیشن سے اپنی تحریری شکایت میں امت شاہ کے خلاف 153 اے کے تحت ایف آئی آر درج کر مناسب کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here