دہلی یونیورسٹی کو 8 مارچ تک بند کرنے کا فیصلہ،جانیں وجہ

Share Article

DU

دہلی یونیورسٹی(ڈی یو) کوبندکرنے کافیصلہ لیاگیاہے۔دراصل، جمعرات کو ہوئی ایگزیکٹو میٹنگ میں 8 مارچ تک ڈی یو بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ جبکہ، پہلی عام میٹنگمیں 27 سے 1 مارچ تک ڈی یو بند کا اعلان کیا گیا تھا۔اس دوران یونیورسٹی اور کالجوں میں تعلیمی کام متاثر ہو سکتا ہے۔ بتا دیں کہ گزشتہ پانچ سالوں میں پہلی بار ڈی یو مسلسل 10 دن تک بند کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔

لائیوہندوستان کی رپورٹ کے مطابق،ڈی یو ٹیچر یونین کے صدر راجیب رے نے بتایا کہ ٹیچر آج دکھی ہیں کیونکہ ان کے مطالبات کو نہیں سنا جا رہا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ بند کو جاری رکھنے کا فیصلہ مجلس عاملہ نے لیا ہے۔ ہم طالب علموں کے مستقبل کو لے کر بھی فکر مند ہیں۔ ہم ان کے کورس کی بھرپائی کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ڈی یو میں بند اس لئے بھی ضروری ہے کہ اگر ہمارے مطالبات پر غور نہیں کیا گیا تو بہت سے ٹیچروں کی نوکری چلی جائے گی۔

ٹیچر تنظیم کے نمائندوں کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ حکومت اور ڈی یو کی طرف سے ان کی مانگ کی ہو رہی مسلسل نظرانداز کی وجہ لیا گیا ہے۔ ڈوٹا کے نائب صدر سدھانشو کمار نے بتایا کہ مجلس عاملہ کے ارکان نے یہ فیصلہ لیا ہے اور سب نے اس کی حمایت کی ہے۔13 پوائنٹ روسٹر، تقرری، پرموشن، ایڈجسٹمنٹ سمیت تمام ایسے ٹیچروں کے مسئلے ہیں، جس پر اب تک نہ تو حکومت اقدامات کر رہی ہے اور نہ ہی ڈی یو۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *