پونچھ میں پاکستانی فوج کے سرحدی علاقوں میں فائرنگ سے مرنے والوں کی تعداد دو ہوئی

Share Article

 

نو زخمیوں میں سے دو کی حالت نازک، سرحد پر آباد لوگوں میں خوف و ہراس

پاکستانی فوج ہر بار منہ کی کھانے کے بعد بھی اپنی حرکتوں سے باز نہیں آ رہی ہے۔اپنے ناپاک ارادوں کو کامیاب کرنے کے لئے منگل کو دوپہر پاکستانی فوج کے پونچھ ضلع کے شاہ پور اورکرنی سیکٹر میں ہوئی زبر دست فائرنگ میں عورت سمیت دو لوگوں کی موت ہو گئی ہے۔ پاکستان فوج نے فوجی چوکیوں اور ررہائشی علاقوں کو نشانہ بنا کر مارٹر بھی داغے تھے۔ پاکستان کی اس فائرنگ نو افراد زخمی ہو گئے تھے۔ تمام زخمیوں کو ڈسٹرکٹ اسپتال پونچھ میں داخل کرایا گیا تھا جہاں سے نازک حالت کے سبب دو لوگوں کو جموں ریفر کر دیا گیا تھا۔

بدھ کو بھی جی ایم سی میں ریفر زخمیوں کی حالت نازک بنی ہوئی ہے۔ بھارتی جوانوں نے بھی پاکستانی فائرنگ کا منھ توڑ جواب دیا تھا۔مانا جا رہا ہے کہ بھارت کی جوابی کارروائی میں پاکستانی فوج کو بھاری نقصان پہنچا ہے۔ اس سے سرحد پر آباد لوگوں میں خوف و ہراس کا ماحول ہے۔ پاک فائرنگ کے تبادلے میں ہلاک ہونے والوں کی شناخت گلناز کوثر اور شعیب احمد دونوں رہائشی بانڈی چیچیاں کے طور پر ہوئی ہے جبکہ زخمیوں کی شناخت شاہناز، فاطمہ جان رہائشی شاہ پور اور محمد عرفان، منیر شاہ، ایوب نظارت حسین، شاہدہ اختر، فاطمہ بی اور نذیر حسین شامل ہیں۔ یہ تمام بانڈچیچیاں گاؤں کے رہنے والے ہیں۔ پاکستانی فائرنگ میں متعدد مکانات کو نقصان پہنچا اور متعدد مویشی بھی مارے گئے ہیں۔ بھارتی جوانوں نے بھی پاک فائرنگ کا منھ توڑ جواب دیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *