بہارمیں لو کا قہر، تین اضلاع میں 72 لوگوں کی موت

Share Article

 

دارالحکومت پٹنہ دہائیوں بعد شدید گرمی کی زدمیں ہے ۔گرمی ایسی ہے کہ نہ صبح میں چین اور نہ ہی رات میں سکون مل رہی ہے۔ ہفتہ کو گرمی نے 53 سالوں کا ریکارڈ توڑ دیا۔ ہفتہ کو درجہ حرارت تقریباً 46 ڈگری تک پہنچ گئی تھی۔ صبح سے شروع ہوئی گرم ہوائیں دیر رات تک چلتی رہی اور لو نے بہار میں شدید تباہی برپاکیا۔ لو کی شدید گرمی اور لو سے مگدھ ڈویژن میں اب تک 72 لوگوں کی موت ہو گئی۔ اس کی تعداد بڑھنے کا سلسلہ جاری ہے۔

Image result for high temperature in bihar

اورنگ آباد ضلع میں ہفتہ کودیر رات تک 34، گیا میں 25 اور نوادہ میں 13 لوگوں کی موت ہو گئی۔ اورنگ آباد کے سول سرجن ڈاکٹر سریندر پرساد سنگھ نے لو سے 34 لوگوں کی موت ،گیا کے ڈی ایم نے لو سے 12 اور نوادہ کے ڈی ایم کوشل کمار نے 03 لوگوں کی موت لو سے ہونے کی تصدیق کی ہے۔ ریاستی حکومت نے لو سے مرنے والوں کے اہل خانہ کو چار چار لاکھ روپے امداد دینے کا اعلان کیا ہے۔ لو کا اثراتوار کو بھی جاری ہے۔

Image result for high temperature in bihar

لو سے اورنگ آباد میں ہفتہ کی دوپہر سے لوگوں کے موت کا سلسلہ شروع ہوا اور دیر رات تک 34 لوگوں کی موت ڈی ڈی سی دھنشیام مینا کے مطابق صدر اسپتال میں ہیٹ اسٹروک میں مبتلا بہت سے لوگوں کا علاج یہاںچل رہا ہے۔ وہیں گیا میں مگدھ میڈیکل کالج اسپتال میں مختلف اضلاع کے 25 لوگوں کا علاج کیا جا رہا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *