طالب علم کے اغوا اور قتل کے معاملہ کا ملزم تصادم میں گرفتار، ساتھی فرار

Share Article

 

غازی آباد، 04 مئی (ہ س)۔ مودی نگر پولیس نے ہفتے کی صبح تصادم میں 25 ہزار روپے کے انعامی بدمعاش اجے عرف دنیش کو گرفتار کیا ہے۔ اجے ایک ہفتے پہلے مودی نگر سے طالب علم آدتیہ بنسل کے اغوا کے بعد قتل کے معاملے میں شامل تھا۔ تصادم کے دوران دونوں جانب سے چلی گولیوں سے بدمعاش اور ایک سپاہی زخمی ہو گئے۔ گرفتار بدمعاش اجے عرف دنیش شیرپور گاؤں کاباشندہ ہے۔ اس کا ساتھی منیش راٹھی فرار ہو گیا۔ ایس پی دیہات نیرج جادون نے ہفتہ کو بتایا کہ مودی نگر پولیس ہاپوڑ روڈ پر گاؤں گدانا بجلی گھر کے قریب آنے جانے والی گاڑیوں کی چیکنگ کر رہی تھی۔ اسی دوران ایک موٹر سائیکل پر دو نوجوان آتے ہوئے دکھائی دیئے، جنہیں پولیس نے رکنے کا اشارہ کیا۔ ان نوجوانوں نے رکنے کے بجائے پولیس پارٹی پر فائرنگ شروع کر دی۔ پولیس نے بھی جوابی کروائی کی۔اس میں ایک بدمعاش کے پاؤں میں گولی لگ گئی اور وہ نیچے گر گیا۔ پولیس نے اسے دبوچ لیا۔ اگرچہ اس کا ساتھی فرار ہو گیا۔ اس تصادم میں کانسٹیبل عرفان کو گولی لگی ہے۔

 

Image result for Student kidnap and murder case arrested in a ghaziabad

جادون نے بتایا کہ زخمی بدمعاش کا نام اجے عرف دنیش ہے جو شیرپور گاؤں کا رہنے والا ہے۔مفرور بدمعاش منیش راٹھی بھی شیرپور کا ہی رہنے والا ہے۔ بدمعاش ایک ہفتے پہلے طالب علم آدتیہ بنسل کے اغوا اور قتل کے معاملے میں شامل تھا۔ پولیس نے اس کی گرفتاری پر 25 ہزار روپے کا انعام کا اعلان کر رکھا تھا۔ بدمعاش کے قبضے سیطمنچہ اور موٹر سائیکل برآمد ہوئی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *