ریاستی حکومت کے وزیر جیتو پٹواری نے شیوراج کو بتایا چاپلوس

Share Article

 

کشمیر سے دفعہ ۔370 ہٹائے جانے کے بعد ریاست کے رہنماؤں میں شروع ہوئی بیان بازی تھمنے کا نام نہیںلے رہی ہے۔ پہلے سابق وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان نے کشمیر مسئلہ کے لئے پہلے وزیر اعظم پنڈت جواہر لال نہرو کو قصور وار بتایا تھا، اب ریاستی حکومت کے وزیر جیتو پٹواری نے سابق وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان کو چاپلوس قرار دیا ہے۔

ریاست کے اعلیٰ تعلیم وزیر جیتو پٹواری نے شیوراج کے اس بیان پر جوابی حملہ کیا ہے، جس میں شیوراج نے کشمیر سے 370 ہٹانے پر پی ایم مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ کی تعریف کرتے ہوئے کہا تھا کہ میں پی ایم مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ کو اپنا لیڈر مانتا تھا ، لیکن ان کے اس فیصلے کے بعد اب میں ان کی پوجا کرتا ہوں۔ ان کے اس بیان پر وزیر جیتو پٹواری نے سوشل میڈیا کے ذریعے جوابی حملہ کیا ہے۔ انہوں نے ٹویٹ کیا ہے- ’شیوراج جی، آپ بی جے پی میں اپنی “ساکھ” ختم ہونے کے خوف سے اسے بچانے کے لئے مودی شاہ کی پوجا توکی ان کے پاؤں دھوکر پانی پئے تو بھی ہمیں قطعی اعتراض نہیں … لیکن ملک کے پہلے وزیر اعظم جواہر لال نہرو جی پر بار بار تبصرہ آپ کے ’’ذہنی دیوالیہ پن‘‘ کو درشا رہا ہے .. ‘. وزیر پٹواری نے اپنے اگلے ٹویٹ میں لکھا ہے-’مدھیہ پردیش کی اقتدار سے بے دخل ہونے کے بعد بی جے پی میں اپنا ’’وجود‘‘ کو بچانے کے لئے مودی شاہ کی چاپلوسی میں مشغول شیوراج جی مدھیہ پردیش کے وقار کا خیال رکھیں … آپ 13 سال ریاست کے وزیر اعلیٰ رہے، مدھیہ پردیش کے عوام کو پہلے احساس تھا کہ وزیر اعلیٰ کیا لیکن کیا پتہ تھا کہ چاپلوس کیا …‘

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *