مایاوتی نہیں، یوپی میں اکھلیش سے ہوگا پرینکا گاندھی کا براہ راست مقابلہ

Share Article

 

اتر پردیش میں سماجوادی پارٹی-بی ایس پی اتحاد نے سیٹوں کا اعلان کر دیا ہے۔ سماج وادی پارٹی کے اکاؤنٹ میں 37 اور بی ایس پی کے اکاؤنٹ میں 38 نشستیں آئی ہیں۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ سماج وادی پارٹی کو زیادہ تر سیٹیں ایسی ملی ہیں، جہاں گزشتہ انتخابات میں کانگریس دوسرے نمبر پر رہی تھی۔ اس کا مطلب صاف ہے کہ پرینکا کا مقابلہ مایاوتی سے نہیں بلکہ اکھلیش یادو سے ہوگا۔

 

Image result for priyanka gandhi and akhilesh yadav

اتر پردیش میں سماجوادی پارٹی-بی ایس پی اتحاد نے سیٹوں کا اعلان کر دیا ہے۔ صوبہ کی 80 لوک سبھا سیٹوں میں سے 38 پر بی ایس پی اور 37 پر ایس پی انتخابی میدان میں اترےگي۔ اکھلیش یادو کے اکاؤنٹ میں ایسی پارلیمانی نشستیں آئی ہیں، جہاں ان کا مقابلہ بی جے پی کی بجائے کانگریس سے گے۔ صوبے کی ایسی قریب ایک درجن لوک سبھا سیٹیں ہیں،جہاں پرینکا گاندھی کے آنے کے بعد کانگریس مضبوط مانی جا رہی ہے۔ ایسے میں ان سیٹوں پر پرینکا کا مقابلہ مایاوتی سے نہیں بلکہ اکھلیش سے ہوتا نظر آ رہا ہے۔

 

Image result for priyanka gandhi and akhilesh yadav

بتا دیں کہ 2014 کے انتخابات میں اتر پردیش کی 80 لوک سبھا سیٹوں میں سے کانگریس محض دو سیٹیں امیٹھی اور رائے بریلی ہی جیت سکی تھی۔اس کے علاوہ چھ ایسی نشستیں تھیں، جہاں پر وہ دوسرے نمبر پر رہی تھی۔ ان میں لکھنؤ، کانپور، کشی نگر، غازی آباد، سہارنپور اور بارہ بنکی پارلیمانی نشستیں شامل تھیں۔ اس کے علاوہ وارانسی اور مرزا پور لوک سبھا سیٹ پر ایس پی سے زیادہ ووٹ کانگریس کو ملا تھا۔صوبے میں ایس پی-بی ایس پی کے درمیان سیٹ شیئرنگ میں اکھلیش کے اکاؤنٹ میں لکھنؤ، کانپور، کشی نگر، غازی آباد، وارانسی اور بارہ بنکی پارلیمانی نشستیں آئی ہیں۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ ان میں سے بہت سے سیٹیں ایسی ہیں، جہاں پر سماجوادی پارٹی نے کبھی جیت کا ذائقہ نہیں چکھا ہے۔جبکہ ان سیٹوں پر زیادہ تر مقابلہ کانگریس اور بی جے پی کے درمیان ہوتا رہا ہے۔ یہی نہیں کانپور میں ایس پی چوتھے اور وارانسی میں پانچویں نمبر پر رہی تھی۔ جبکہ لکھنؤ، غازی آباد، اور کشی نگر میں کافی پیچھے رہی تھی۔

 

Image result for priyanka gandhi and akhilesh yadav

 

پرینکا گاندھی کے سیاسی دستک دینے کے بعد صوبے کے سیاسی مساوات بدلے ہیں اور کانگریس کارکنوں اور رہنماؤں میں نیا جوش دکھائی دے رہا ہے۔ پرینکا کو یوپی کے پوروانچل کی 41 لوک سبھا سیٹوں کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔ انہوں نے ان لوک سبھا سیٹوں کے کارکنوں سے براہ راست ملاقات کر کے سیاسی مزاج کو سمجھنے کی کوشش کی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *