شرمناک: یوگی جی! دیکھئے ریاست میں بیٹیاں کتنی محفوظ ہیں؟ میرٹھ میں اسکولی طالبہ سے کھلے عام چھیڑچھاڑ کا ویڈیو وائرل

Share Article
meerut

میرٹھ: تقریبا پانچ دن پہلے ہی اتر پردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے ایک پریس کانفرنس کرکے اپنی سرکار کی خوبیاں گنوائی تھی۔دعویٰ کیا تھا کہ جب سے اقتدار ان کے ہاتھ میں ہے ریاست سے جرائم کا خاتمہ ہو گیا ہے۔ بیٹیاں محفوظ ہیں اور اب وہ بغیر ڈر -خوف سے جی سکتی ہے۔لیکن اب جو ایک ویڈیو سامنے آیا ہے۔ اس نے یوگی سرکار کے تمام دعوؤں کی دھجیاں اڑا دی ہے۔ ویڈیوبتاتا ہے کہ کیسے ریاست میں منچلے بے خوف ہیں۔

اس ویڈیو میں ایک اسکولیطالبہ کے ساتھ کچھ منچلے زور زبردستی کرتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔ وہ اس قدر بے خوف ہیں کہ انہوں نے اس واقعہ کو اسکول میں گھس کر انجام دیا ہے۔ ویڈیو میرٹھ کا ہے جہاں کچھ منچلوں کی ہمت اتنی زیادہ بڑھ گئی ہے کہ اسکول میں امتحان دینے جا رہی بچی سے انہوں نے کھلے عام غنڈہ گردی کی۔ بے خوف منچلوں نے اسکول کے احاطے میں طالبہ کو گھیر کر چھیڑچھاڑ اور بدسلوکی کرتے ہوئے اسے ڈرایا۔دھمکایا۔ نوجوانوں نے اغوا کرنے کی بھی کوشش کی۔اتنا ہی نہیں ان غنڈوں کی اتنی ہمت تھی کہ انہوں نے اس واقعہ کا ویڈیو بھی بنایا اور اسے وائرل بھی کر دیا۔

جو میں ویڈیو سامنے آیا ہے وہ میرٹھ میں کٹھور کے ایک گرلز کالج کا بتایا جا رہا ہے۔ اس ویڈیو میں ایک نابالغ لڑکی خود کو بچانے کے لئے ہاتھ پیر جوڑ رہی ہے۔کسی طرح وہ ان کے چنگل سے چھوٹ جاتی ہے تو غنڈے اسے پیچھے سے دھمکاتے ہیں۔طالبہ کے نکل جانے کے بعد ویڈیو میں جو سنائی دیتا ہے، اس سے ان بدمعاشوں کے خطرناک اور گھناؤنے ارادوں کا پتہ چلتا ہے۔جس سے صاف ظاہر ہے کہ منچلوں کو کسی طالبہ کی عزت سے کوئی لینادینا نہیں ہے۔

ان نوجوانوں کا سرغنہ میں سے ایک نوجوان ویڈیو میں باقی ساتھیوں سے بولتا ہے، ’چھوڑ کیوں دیا ۔۔۔..، اسے، جا لے کر آ اسے ۔۔۔‘۔ اس دوران دوسرا بولتا ہے میں تو ویڈیو بنا رہا تھا۔ میں کیا کرتا۔سرغنہ پھر بولتا ہے، دماغ خراب کر دیا، کیسے چھوڑ دیا۔ ایک بولتا ہے ویڈیو تو بن گیا ہے، بچے گی کیسے۔

اس ویڈیو میں پورے وقت معصوم لڑکی گڑگڑاتی رہی ،روتی رہی۔ مدد کے لئے چیختی ہے، لیکن اسکول ڈریس پہنے بیحد معصوم سی نظر آرہی اس بچی کا ان وحشینوجوانوں پر کوئی اثر نہیں ہوتا ہے۔طالبہ بھاگ نہ جائے، اس لئے دو دو وحشی نوجوان اس کا ایک ہاتھ پکڑ کر مروڑتیہیں اور ایک بدمعاش اس کے پیر کے پنجے کو بے دردی سے اپنے ایک پیر سے دبا کر رکھتا ہے۔

ان میں سے ایک اپنے ساتھی کو اس پورے واقعہ کا ویڈیو بنانے کا ہدایت دیتا ہے۔ اس دوران بدمعاش اس کے ہاتھ میں زبردستی ایک چاکلیٹ کا پیکٹ تھما دیتے ہیں۔بچی امتحان دینے جا رہی تھی، اس لیے اس کے ہاتھ میں اسٹیشنری کا چھوٹا سا پرس بھی ہے۔

اب اس دل دہلانے والا ویڈیو سامنے آنے کے بعد پولیس بھی حیران رہ گئی ہے۔ ایس ایس پی کی ہدایت پر کٹھور پولیس نے ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کیا۔ ملزمان کی تلاش میں دبش دی گئی، لیکن وہ ہتھے نہیں چڑھے۔طالبہ کے بیان کورٹ میں درج کرانے کی بات کہی ہے۔متاثرہ طالبہ کوشیڈول کاسٹ کا بتایا جا رہا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *