ساردا چٹ فنڈ گھوٹالہ: سی آئی ڈی نے سی بی آئی کو سونپا خط، کہا وارانسی میں ہیں راجیو کمار

Share Article

 

ساردا چٹ فنڈ گھوٹالے میں ثبوت مٹانے کے ملزم کولکاتہ پولیس کے سابق کمشنر راجیو کمار کی گرفتاری اور فراری کی قواعد کے درمیان پتہ چلا ہے کہ وہ وارانسی میں ہیں۔ راجیو کو پیر کی صبح 10 بجے سی بی آئی کے سامنے پوچھ گچھ کے لئے پیش ہونا تھا۔

 

سی آئی ڈی کے ڈی ایس پی مدھوسودن گھوش اور انسپکٹر ابھیجیت مکھرجی نے راجیو کمار کی جانب سے پیرکی صبح ساڑھے گیارہ بجے سی بی آئی کے مشرقی علاقائی ہیڈ کوارٹر پر ایک خط سونپا ہے۔ خط میں لکھا گیا ہے کہ راجیو کمار فی الحال چھ دن کی چھٹی پر وارانسی میں ہیں۔ لہٰذا وہ پوچھ گچھ کے لئے حاضر نہیں ہو سکے ہیں۔ تاہم، وہ کب آئیں گے یا کب آ سکتے ہیں، اس بارے میں معلومات نہیں دی گئی ہے۔

 

سی آئی ڈی کے ایک افسر نے بتایا کہ راجیو کمار کو لے کر تمام طرح کی قیاس آرائی کی جا رہی ہیں، لیکن وہ فرار نہیں ہیں۔ وہ چھٹی پر وارانسی میں ہیں۔ سی بی آئی کو اس بارے میں معلومات دے دی گئی ہے۔

 

سی بی آئی کے ایک اعلیٰ افسر نے بتایا ہے کہ سی آئی ڈی نے جو خط دیا ہے اس کی کاپی سمیت پوری صورت حال کے بارے میں سی بی آئی ڈائریکٹر کو رپورٹ بھیجی گئی ہے۔ وہاں سے جو ہدایات ملیں گی اس کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔

 

قابل ذکر ہے کہ راجیو کمار کو بنگال حکومت نے ریاست سی آئی ڈی کے اے ڈی جی کے عہدے پر اتوار کے روز بحال کیا ہے۔ اسی دن چار رکنی سی بی آئی کی ٹیم نے ڈی ایس پی منیش اپادھیائے کی قیادت میں کولکاتہ کے 34 نمبر پارک اسٹریٹ واقع آئی پی ایس رہائش گاہ، کولکاتہ پولیس کے جنوبی انتظامی محکمہ کے ڈپٹی کمشنر معراج خالد اور ریاستی سی آئی ڈی ہیڈکوارٹر میں راجیو کمار سے پوچھ گچھ کے لئے تلاشی مہم چلائی تھی، لیکن وہ نہیں ملے۔

 

اس کے بعد جانچ ایجنسی نے نوٹس دے کر انہیں پیر کی صبحدس بجے تک سی جی او کمپلیکس واقع سی بی آئی کے مشرقی علاقائی ہیڈ کوارٹر میں حاضر ہونے کے لئے کہا تھا۔ راجیو کمار 10 بجے کے بعد بھی جب سی بی آئی دفتر نہیں پہنچے تو یہ قیاس آرائی کی جا رہی تھی کہ وہ فرار ہو گئے ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *