سادھوی پرگیہ کو وزارت دفاع کی کمیٹی کا رکن بنائے جانے پر کانگریس نے اٹھائے سوال

 

بھوپال سے بی جے پی کے رہنما سادھوی پرگیہ ٹھاکر کو وزارت دفاع کی کمیٹی کا رکن بنائے جانے پر سیاست شروع ہو گئی ہے۔ کانگریس نے سادھوی پرگیہ کو مرکزی دفاعی کمیٹی کا رکن بنائے جانے پر سوال اٹھاتے ہوئے اسے بھارتی فوج، دیگر تمام سیکورٹی ایجنسیوں اور ملک کی سرحد کی حفاظت کرنے والے ہر فوجی کی توہین بتایا ہے۔

Image result for Sadhvi Pragya Congress raised the question of being a member of the Defense Committee
اکثر اپنے متنازعہ بیانوںکی وجہ سے سرخیوں میں رہنے والی بھوپال سے بی جے پی ایم پی سادھوی پرگیہ ٹھاکر کو مرکز کی مودی حکومت نے اہم ذمہ داری سونپتے ہوئے مرکزی دفاعی کمیٹی کا ممبر بنایا ہے۔سادھوی پرگیہ کو دفاعی کمیٹی کا رکن بنائے جانے پر کانگریس نے سوال اٹھائے ہیں۔ عوامی رابطہ کے وزیر پی سی شرما نے جمعرات کو میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سادھوی پرگیہ کو رکن بنائے جانے کے فیصلہ کو بدقسمتی بتایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے قول وفعل میں یہی فرق ہے، ایک مجرم کو دفاعی کمیٹی میں لینا بدقسمتی کی بات ہے۔

Image result for Sadhvi Pragya Congress raised the question of being a member of the Defense Committee
کانگریس کانگریس کے ترجمان کے کے مشرا نے بھی سادھوی پرگیہ کو مرکزی دفاعی کمیٹی کا رکن بنائے جانے پر شدید رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اسے آزاد ہندوستان کا بڑا المیہ ہی کہا جائے گا کہ ایک ’خاتون دہشت گردپراگیہ سنگھ ٹھاکر‘ جو، مدھیہ پردیش کے دارالحکومت بھوپال سے بی جے پی ایم پی ہے، کو وزیر دفاع کی صدارت والی داخلی سلامتی کمیٹی میں شامل کیا گیا ہے، شاید اب اس ملک کی حفاظت ’بھگوان رام‘ بھی نہیں کر پائیں گے؟ ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *