نئے موٹر وہیکل ایکٹ سے کم ہوئے سڑک حادثات

Share Article

 

نئی دہلی، دارالحکومت دہلی میں یکم ستمبر 2019 سے نافذ ہوئے نئے موٹر وہیکل ایکٹ کو ایک مہینہ مکمل ہو گیا ہے۔اس کے ایک ماہ میں دارالحکومت میں جہاں ایک طرف گاڑی ڈرائیوروں کے درمیان بہت بہتری دیکھنے کو ملی ہے، وہیں سڑک حادثوں میں بھی کافی کمی دیکھی گئی ہے۔

دہلی پولیس کے ترجمان انل متل نے بتایا کہ نئے موٹر وہیکل ایکٹ کے بعد ستمبر ماہ کی بات کریں تو سال 2018 کے مقابلے اس سال سڑک حادثوں میں 100 سے زیادہ لوگوں کی جان بچی ہے۔ انل متل کے مطابق سال 2018 کے ستمبر ماہ تک سڑک حادثوں میں جہاں 236 لوگوں کی موت ہوئی تھی، وہیں ستمبر 2019 میں 92 لوگ سڑک حادثوں کے شکار ہوئے۔ ٹریفک پولیس کا خیال ہے کہ آنے والے وقت میں یہ تعداد مزید کم ہوجائیگی۔اطلاعکے مطابق، دارالحکومت میں بڑھتے سڑک حادثوں کو ذہن میں رکھتے ہوئے ہی موٹر وہیکل ایکٹ میں ترمیم کی گئی ہے۔ اس ترمیم کے بعد سے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے پرچالان کی رقم 10 سے 20 گنا تک بڑھادی گئی ہے۔

نئے موٹر وہیکل ایکٹ یکم ستمبر سے نافذ ہونے کے بعد سڑک حادثوں میں کافی کمی واقع ہوئی۔ ٹریفک پولیس سے حاصل اعدادوشمار کے مطابق گزشتہ سال کے مقابلے اس سال کے ستمبر ماہ میں سڑک حادثات میں 142 لوگوں کی کم موت ہوئی ہے۔ ٹریفک پولیس کے جوائنٹ کمشنر این ایس بندیلا نے بتایا کہ ابھی تعداد کے بارے میں کچھ بھی کہنا جلد بازی ہوگی، لیکن یہ صاف ہے کہ گزشتہ سال کے مقابلے اس سال سڑک حادثہ میں ہونے والی اموات میں کمی آئی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *