طالبات کا انکشاف: وارڈن گھر بلا کر کہتی تھی شوہر کے دوست کے ساتھ کرو دوستی

Share Article

rajasthan-girls

الور:راجستھان کے الور ضلع میں سرکاری ہاسٹل کی نالغ طالبات کے ساتھ مبینہ طورسے چھیڑ خانی معاملے میں ہاسٹل وارڈن اور اس کے شوہر کو کو گرفتار کر لیا گیا۔

کلاس 12 ویں کی دونابالغ طالبات نے ہاسٹل وارڈن اور اس کے شوہر،اس کے دوستوں کی کے ذریعہ چھیڑ خانی کرنے اور دیگر دوستوں کے ساتھ دوستی کرنے کے لیے دباؤ ڈالنے کی شکایت کے بعد پولیس نے اتوار کو جوڑے کو گرفتار کیا ہے۔ طالبات نے الزام لگایا کہ وارڈن فون کر انہیں اپنے گھر بلاتی تھی اور اس کے شوہر کو اس کے دوست کے ساتھ دوستی کرنے کے لیے دباؤ ڈالتی تھی۔

الور کے علاوہ پولیس سپرنٹنڈنٹ مہیش ترپاٹھی نے اتوار کو بتایا کہ کلاس 12 ویں کی طالبات سے چھیڑ خانی کرنے اور اس کے شوہر کی طرف سے نابالغ طالبات کو اس کے دوست کے ساتھ دوستی کرنے کے لیے دباؤ ڈالنے کا معاملہ ہفتہ کو کشن گڑھ باس تھانہ میں درج کیا گیا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ معاملہ کے روشنی میں آنے کے بعد کشن گڑھ باس کی نگراں سرکل افسر نیہا اگروال نے متاثرین کے اتوار کو بیان درج کئے۔ دوپہر میں ملزم گرلس طالبات وارڈن نل کمل یادو (39) اور اس کے شوہر نریش یادو (40) کو تعزیرات ہند کی دفعہ 354 (A) (جنسی استحصال) سے منسلک جرائم، 120۔B مجرمانہ سازش، پاکسو ایکٹ، ایس سی ؍ ایس ٹی (انسداد استحصال) ایکٹ کی متعلقہ دفعات کے تحت گرفتار کیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ نریش یادو الور کے تجارا علاقے کے ایک سرکاری اسکول میں ٹیچر ہے۔ وہیں ہریانہ کے فرید آباد رہائشی تیسرا ملزم اور نریش یادو کا دوست فرار ہے۔ اس کی تلاش کی جا رہی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *