اپنی بایوپک میں کس کو ہیروئن لینا چاہتے ہیں راہل گاندھی؟ کانگریس صدر نے دیایہ جواب

Share Article
rahul-gandhi

کانگریس صدر راہل گاندھی نے جمعہ (5 اپریل، 2019) کو پونے کے ہڑپسر علاقے میں کالج کے طالب علموں سے ملاقات کی۔ انہوں نے طالب علموں کی طرف سے پوچھے گئے بہت سے سوالات کا جواب دیا۔ اس دوران جب کانگریس صدر سے پوچھا گیا کہ ان کی زندگی پر بایوپک میں ہیروئن کسے ہونا چاہئے۔ دراصل یہ سوال اداکار اور ہدایت کار سبودھ بھاوے نے پوچھا کہ وہ بایوپک بنانا چاہتے ہیں، مگر اس کے لئے ان کے سامنے ایک مسئلہ ہے۔

rahul-in-pune
راہل گاندھی نے وہ مسئلہ پوچھا تو انہوں نے جواب دیا کہ آپ کی ہیروئن کون ہے؟ اس کا جواب انہوں نے مسکراتے ہوئے دیا، ’میں نے بدقسمتی سے اپنے کام سے ہی شادی کر لی ہے‘۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ بالاکوٹ فضائی حملے کا کریڈٹ فوج کو لینا چاہئے۔ کم از کم آمدنی کی اسکیم پر انہوں نے کہا کہ غریبوں کے لئے ‘نیائے’ یا کم از کم آمدنی اسکیم مڈل کلاس پر بوجھ ڈال کر یا انکم ٹیکس بڑھائے بغیر لاگو کی جائے گی۔

گاندھی نے کہا کہ اگر ان کی کانگریس پارٹی اقتدار میں آئی تو غریب خاندانوں کو کم سے کم آمدنی کے طور پر ہر سال 72،000 روپے دے گی جس سے تقریبا 25 کروڑ لوگوں کو فائدہ ہو گا۔ اس قدم کو گاندھی نے غریبی پر ‘سرجیکل اسٹرائک’ بتایا ہے۔ یہ پوچھے جانے پر کہ کم از کم آمدنی اسکیم (نیائے) کے لئے فنڈ کس طرح جمع کیا جائے گیا، اس پر گاندھی نے کہا، ‘مڈل کلاس سے پیسہ نہیں لیا جائے گا اور انکم ٹیکس نہیں بڑھایا جائے گا‘۔

طالب علموں سے بات چیت میں کانگریس صدر نے کہا کہ یوجنا کے لئے فنڈ جمع کرنے کے سلسلے میں سارا حساب لگا لیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسانوں اور غریبوں سمیت سماج کے تمام طبقات سے رائے لینے کے بعد کانگریس کا منشور تیار کیا گیا ہے۔ گاندھی نے کہا، ‘’’ تمام فریقین سے بات چیت کے بعد کانگریس کا انتخابی منشور تیار کیا گیا ہے‘‘۔ ملک میں روزگار کی صورت حال کے بارے میں پوچھے جانے پر انہوں نے کہا کہ ہندوستانمیں ہر گھنٹے قریب 27،000 نوکریاں کم ہو رہی ہے۔

کانگریس کے سربراہ نے وعدہ کیا کہ اگر ان کی پارٹی اقتدار میں آئی تو پارلیمنٹ، اسمبلیوں میں خواتین کے لئے 33 فیصد نشستیں مخصوص کی جائے گی۔ بہن پرینکا گاندھی کے ذریعے کانگریس صدر کو بہادر بتانے کے جواب میں انہوں نے کہا: میں کمزور لوگوں کے لئے کھڑا ہوں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *