بہار انٹرمیڈیٹ بورڈ کے پرچہ لیک کے ملزم کو کانگریس نے بنایا پرینکا گاندھی کا سیکریٹری

Share Article
kumar-ashish
لوک سبھا انتخابات سے پہلے کانگریس نے اتر پردیش پر اپنا زور لگا دیا ہے۔ مشرقی اترپردیش کی کمان پرینکا کو سونپی گئی ہے تو مغربی یوپی میں مدھیہ پردیش کے سینئر لیڈر جیوتیرادتیہ سندھیا کو کانگریس نے انچارج بنایا۔ اس درمیان دونوں کی مدد کے لئے تین سیکریٹری بھی مقرر کئے گئے ہیں۔لیکن اس کے ساتھ ہی نیا تنازعہ کھڑا ہو گیا ہے۔پرینکا کی ٹیم بہار یوتھ کانگریس کے سابق صدر کمار آشیش کو بھی جگہ دی گئی ہے۔
WhatsApp-Image-2019-02-20
پارٹی تنظیم کے سیکریٹری جنرل کے سی وینو گوپال کی جانب سے جاری بیان کے مطابق پرینکا کے تعاون کے لئے زبیر خان، کمار آشیش اور باجی راؤ کھاڈے کو سیکریٹری کی ذمہ داری دی گئی ہے۔
WhatsApp-Image-2019-02-20
حیرانی کی بات یہ ہے کی یہی کمار آشیش کو بہار پولیس نے بہار انٹرمیڈیٹ امتحان کے دوران ریاضی کا پرچہ لیک کرنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔ اتنا ہی نہیں کمار آشیش کو پارٹی سے نکال دیا گیاتھا۔ پٹنہ پولیس کی ایک ٹیم نے شہر کے بورنگ روڈ علاقے میں واقع کرشنا اپارٹمنٹ میں ریڈ کر پانچ افراد کو گرفتار کیا تھا، جن میں سے ایک نوجوان کانگریس کے لیڈر کمار آشیش بھی تھے۔ پولیس نے ان کے پاس سے ریاضی کے امتحان کے کاغذ بھی برآمد کئے تھے۔
Master
اب اسی کمار آشیش کو پرینکا گاندھی کی ٹیم میں شامل کرنے کو لے کر کئی سوال کھڑے ہو رہے ہیں۔فی الحال اس معاملے میں کانگریس کی طرف سے کوئی جواب نہیں آیا ہے۔لیکن سوشل میڈیا میں اس کو لے کر پارٹی کی کافی کرکری ہو رہی ہے۔کئی جانکار تو اسے پرینکا کے امیج ڈیمیج ہونے سے بھی جوڑ کر دیکھ رہے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *