پی ایم مودی کے خلاف پرینکاگاندھی الیکشن لڑیں گی!،ٹویٹ میں اشارہ

Share Article
priyanka-gandhi
راہل گاندھی کی بہن پرینکاگاندھی واڈرا کوگذشتہ کانگریس کی جنرل سکریٹری کے طور پر مقرر کرکے مشرقی اترپردیش کی ذمہ داری دی گئی ہے۔اس طرح نہرو گاندھی خاندان کی ایک اور رکن پرینکا گاندھی واڈرا سرگرم سیاست میں داخل ہوگئیں۔خاص بات یہ ہے کہ کانگریس نے جیسے ہی پرینکاگاندھی کوسیاسی میدان میں اتارلگ رہاہے کہ کانگریس کوایک نئی مضبوطی مل گئی ہو۔پرینکاگاندھی کے سرگرم سیاست میں اترنے کے ساتھ ہی کانگریس پارٹی زبردست جوش میں نظرآرہی ہے۔سیاست میں آنے کی خبرکے بعد اب ایک بڑی خبرآرہی ہے کہ پارٹی پرینکاگاندھی کو مودی کے خلاف وارانسی سے میدان میں اتارسکتی ہے۔
ایسا ہم اسلئے کہہ رہے ہیں کیونکہ پارٹی کے سینئرلیڈر اورسابق مرکزی وزیرکپل سبل نے ٹویٹ کرکے اس جانب اشارہ دےئے ہیں۔کپل سبل نے ٹویٹ کیاکہ ’’ مودی جی اورامیت شاہ نے کہاتھا، کانگریس مکت بھارت! اب پرینکاگاندھی کی اترپردیش (مشرقی)میں آنے کے بعد ہم دیکھیں گے … مکت وارانسی؟ …. مکت گھورکھپور؟‘‘ سبل کے اس ٹویٹ کے بعداشارہ صاف ہے کہ کانگریس پارٹی پرینکاگاندھی کووزیراعظم نریندرمودی کے خلاف وارانسی کی سیٹ پرمیدان میں اتارسکتی ہے۔

بہرکیف پرینکاگاندھی واڈرا کوگذشتہ کانگریس کی جنرل سکریٹری کے طور پر مقرر کرکے مشرقی اترپردیش کی ذمہ داری دی گئی ہے۔بدھ کوراہل گاندھی نے میڈیا سے بات چیت میں کہاتھاکہ کانگریس یوپی میں اب فرنٹ فٹ پرکھیلے گی۔ابھی تک پرینکاصرف رائے بریلی اورامیٹھی لوک سبھا سیٹوں پرانتخابی تشہیرکرتی تھیں۔ مگرپرینکاکوکانگریس کی جنرل سکریٹری کے طور پر مقرر کرکے مشرقی اترپردیش کی ذمہ داری دی گئی ہے۔

 

 

 

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *