پرینکا گاندھی کا پی ایم مودی پر نشانہ،کہا:’پاکستان بریانی کھانے گئے تھے‘ کیسے لگا؟

Share Article
priyanka-gandhi

نئی دہلی: کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے پی ایم نریندر مودی پر شدید حملہ بولا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پی ایم مودی سال 2015 میں پاکستان بریانی کھانے گئے تھے۔ وزیر اعظم کے اس بیان پر کہ کانگریس کے جیتنے پر پاکستان کے لوگ خوش ہوں گے، پرینکا گاندھی نے کہا کہ یہ ’ان کی رائے‘ ہے۔ انہوں نے 2015 میں پی ایم مودی اور ان کے ہم منصب نواز شریف کی ملاقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا، ’وہ پاکستان میں بریانی کھانے گئے تھے۔‘انہیں کیسے لگا؟ آپ کو بتا دیں کہ پی ایم مودی 2015 میں بغیر کسی پہلے سے مقرر پروگرام کے اس وقت کے پاکستانی وزیر اعظم نواز شریف سے ملنے پہنچے تھے۔

اس سے پہلے جمعہ کو فیض آباد میں کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے پی ایم مودی کو گھیرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم صرف امیروں سے ملتے اور انہیں مبارک باد دیتے ہیں۔ ان کے پاس دیہات کے لوگوں سے ملنے کا وقت نہیں ہے۔ پرینکا گاندھی نے کہا، ’میں نے وزیر اعظم کے پارلیمانی حلقہ وارانسی کے ایک گاؤں میں لوگوں سے پوچھا کہ یہاں ترقی ہوئی ہے؟ تو انہوں نے جواب دیا کہ 15 کلو میٹر سڑک بنی ہے، یہ سڑک کانگریس سرکار کے وقت میں منظور ہوئی تھی۔ سڑک بننے کے بعد اس کی تشہیر کی جا رہی ہے۔‘ پرینکا نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی ملک و بیرون ملک تو خوب گھومے، لیکن آج تک اپنے پارلیمانی حلقہ وارانسی کے کسی بھی گاؤں میں نہیں گئے۔ انہیں جب دیہات کے بارے میں پتہ ہی نہیں ہے تو وہ ان کی ترقی کیسے کریں گے۔

پرینکانے مودی پر حملہ کرتے ہوئے کہا، ’جب آپ اپنے لوگوں کی آواز نہیں سن سکتے، تب کس طرح کا پاور رکھتے ہیں آپ؟ آپ کے پاور سے لوگوں کو کیا فائدہ؟۔ پرینکا گاندھی نے کہا، ’مودی نے پانچ سالوں میں صرف جھوٹ بولا ہے، نوجوان بے روزگار گھوم رہے ہیں، انہیں نوجوانوں کی فکر نہیں ہے۔ وزیر اعظم کے پاس غریبوں کے لئے وقت نہیں ہے۔ بی جے پی حکومت، عوام مخالف اور کسان مخالف ہے، اس حکومت میں عوام کی سنوائی نہیں ہو رہی ہے۔‘
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *