شہید ’ہیمنت کرکرے‘ کو غدار کہنے والی سادھوی پرگیہ کو وزیر اعظم کی پوری حمایت، کہا۔ جھوٹی کہانی بنائی گئی ہے

Share Article

hemant-modi

مدھیہ پردیش میں بھوپال سے بی جے پی کی امیدوار اور شہید ہیمنت کرکرے کو غدار(ملک مخالف) کہنے والی سادھوی پرگیہ ٹھاکر کو وزیر اعظم نریندر مودی کی مکمل حمایت ہے۔ سادھوی کے امیدوار بنائے جانے پر وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ سادھوی کی امیدواری کانگریس کو مہنگی پڑنے والی ہے۔پی ایم مودی نے بغیر راہل گاندھی اور سونیا گاندھی کا نام لئے کہا کہ امیٹھی اور رائے بریلی سے کانگریس امیدوار بھی تو ضمانت پر رہا ہے۔ اس پر بحث نہیں، لیکن بھوپال کی امیدوار ضمانت پر ہے تو یہ بہت بڑا طوفان کھڑا کر دیتے ہیں یہ کیسے چلے گا۔انہوں نے کہا کہ ان سب کو جواب دینے کے لئے سادھوی پرگیہ ایک علامت ہے اور یہ کانگریس کو مہنگا پڑنے والا ہے۔

راجیو گاندھی پر نشانہ

وزیر اعظم نے سادھوی کی حمایت میں یہ بات ایک نیوز چینل کو دیے اپنے انٹرویو میں کہی، انہوں نے کہا کہ جب 1984 میں اندرا گاندھی کی موت ہوئی، تب ان کے بیٹے نے کہا تھا کہ جب ایک بڑا درخت گرتا ہے تو زمین ہلتی ہے۔اس کے بعدہزاروں سکھوں کا قتل عام ہوا۔کیا یہ کچھ لوگوں کے ذریعے پھیلایا گیا دہشت گردی نہیں تھا؟ اس کے باوجود انہیں ملک کا وزیر اعظم بنایا گیا تب میڈیا نے کبھی ایسا سوال نہیں پوچھا، جیسا وہ اب سوال پوچھ رہے ہیں۔ پی ایم مودی نے کہا کہ ایک خاتون اور ایک سادھوی کو اس طرح تشدد کا نشانہ بنایا گیا، تب کسی نے انگلی نہیں اٹھائی۔

سادھوی کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ جن لوگوں کو کورٹ نے سزا دی ہے، ان کوجاکر لوگ گلے لگا رہے ہیں۔ ایسے لوگوں کو اصول کی باتیں کرنے کا حق نہیں ہے۔ ایک خاتون کو وہ بھی ایک سادھوی کو اس قسم سے تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔ اور میں گجرات میں رہ کر آیا ہوں۔میں کانگریس کو بخوبی سمجھ گیا ہوں۔جیسے فلم کی اسکرپٹ لکھتے ہیں۔ پہلے کاغذ پر بیٹھ کر سکرپٹ لکھتے ہیں۔ ہمارے یہاں جتنے انکاؤنٹر ہوئے، سب کو ایسے ہی چلایا گیا. ہر واقعہ کو ایسے کھینچتے تھے اور جوڑ دیتے تھے۔

وزیر اعظم نریندر مودی نے کانگریس پر کئی سنگین الزام لگائے۔انہوں نے کہا کہ میں گجرات میں رہتا ہوں، میں کانگریس کے تمام طور طریقوں کو سمجھتا ہوں۔کانگریس ایک فلم کی سکرپٹ کی طرح، ایک کہانی گڑھنے کا کام کرتی ہے۔ وہ کچھ اٹھائیں گے، اس میں کچھ جوڑیں گے، اپنی کہانی کے لئے ایک کھلنائک جوڑیں گے تاکہ کہانی کا جھوٹا پروپیگنڈہ کیا جا سکے۔وزیر اعظم نریندر مودی نے کانگریس کو گھیرتے ہوئے کہا کہ گجرات میں جو بھی انکاؤنٹر ہوتے تھے، کانگریس اسی کے مطابق ایک اسکرپٹ تیار کرتی تھی۔ جج لویا کا ذکر کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ ان کی موت قدرتی تھی، لیکن کانگریس نے اس میں بھی اپنے حساب سے ایک کہانی بنائی اور جھوٹ پھیلانے کا کام کیا کہ جج لویا کا قتل کیا گیا ہے۔

لوک سبھا انتخابات میں اپوزیشن کی چیلنج کو لے کر وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ مودی کے لئے سب سے بڑا چیلنج خود مودی ہی ہیں۔ میں نے ہمیشہ خود کو پوری زندگی چیلنج کیا ہے۔ کانگریس پر نشانہ لگاتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آزادی کے بعد پہلی بار، کانگریس اتنی کم سیٹوں سے لڑ رہی ہے۔ان کے پاس امیدوار تک نہیں ہیں۔انہیں ساتھیوں کے ساتھ الیکشن لڑنے کے لئے مجبور ہونا پڑا ہے۔

کانگریس کی ’نیائے ‘(انصاف)اسکیم پر بولتے ہوئے پی ایم مودی نے کہا کہ ہم ملک کے لئے حکومت چلاتے ہیں، اپنی پارٹی کے لئے نہیں۔یہی ہماری سب سے بڑی طاقت ہے۔ ہم جو کچھ بھی کرتے ہیں وہ ملک اور ملک کے 130 کروڑ لوگوں کے لئے ہے۔

 

 

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *