ای سگریٹ کے خطرات سے ناواقف ہیں لوگ: مودی

Share Article

وزیر اعظم نریندر مودی نے صحت مند بھارت کی تعمیر کے لئے سب سے پہلے تمباکو اور ای سگریٹ کے استعمال سمیت منشیات کی لت کو چھوڑنے کا اعلان کیا۔ انہوں نے نوراتری اور دیوالی سمیت دیگر تہوار کی مبارکباد دینے کے ساتھ ہی بیٹیوں کے اعزاز کے لئے ‘بھارت کی لکشمی’ مہم چلانے، سیاحتی مقامات کا دورہ کریں اور مہاتما گاندھی کی 150 ویں یوم پیدائش کے موقع پرسنگل یوز پلاسٹک سے ملک کو آزاد کرانے کی اپیل کی۔

وزیر اعظم مودی نے اتوار کو اپنے ریڈیو پروگرام ‘من کی بات’ میں کہا میں آپ تمام سے تمباکو کی لت چھوڑنے اور ای سگریٹ کے بارے میں کسی بھی قسم کی غلط فہمی نہیں پالنے کی اپیل کرتا ہوں۔ آئیے، ہم سب مل کر ایک صحت مند بھارت کی تعمیر کریں۔ ای سگریٹ کو ممنوع قرار دیئے جانے کو مناسب قرار دیتے ہوئے کہا کہ لوگوں میں یہ بھرم پھیلایا گیا ہے کہ ای سگریٹ سے کوئی خطرہ نہیں ہے۔ ای سگریٹ کو لے کر لوگوں میں بہت کم بیداری ہے۔ وہ اس خطرے سے مکمل طور پر نا واقف ہیں اور اس وجہ سے یہ لوگوں کے گھروں میں چپکے سے گھس رہی ہے۔

تمباکو سے ہونے والی بیماریوں کے خطرے اور صحت کے نقصان کا ذکر کرتے ہوئے مودی نے کہا کہ تمباکو نوشی کے عادی لوگ بھی یہ جانتے ہیں کہ ان کا استعمال نقصان پہنچاتا ہے. اسی کے چلتے وہ گھر کے دیگر ارکان کو اس سے دور رہنے کا مشورہ دیتے ہیں۔ وہ چاہتے ہیں کہ ان کے بچوں کو سگریٹ پینے کی عادت نہ پڑے۔

مودی نے بیٹیوں کو بھارت کی لکشمی قرار دیتے ہوئے ان کے اعزاز کے لئے اس وقت دیوالی پر ‘بھارت کی لکشمی’ مہم چلانے کا اعلان کرتے ہوئے لوگوں سے اپنے ارد گرد رہنے والی بیٹیوں کی کامیابیوں کو زیادہ سے زیادہ سوشل میڈیا پر شیئر کرنے کی بات کہی۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے پہلے سیلفی ود ڈاٹر (بیٹی کے ساتھ تصویر) کی ایک ماہ مہم چلائی تھی اور وہ پوری دنیا میں پھیل گئی۔ اسی طرح اس بار بھارت کی لکشمی مہم چلائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ بھارت کی لکشمی کی حوصلہ افزائی کا مطلب ہے ملک اور ہم وطنوں کے خوشحالی کے راستے مضبوط کرنا۔ اپنے ارد گرد لوگوں کو بیٹیوں کے اعزاز میں پروگرام بھی منعقد کرنے چاہئے۔ آج سے شروع ہوئے نوراتر اور آئندہ تہوار وں کی مبارک دیتے ہوئے کہا کہ اس بار ہم سہولتوں کی عدم دستیابی میں خوشیاں بانٹنے کا عہد اٹھائیں۔ ہمیں چراغ تلے اندھیرا دور کرنا ہے۔ دوسرے کی غیر موجودگی دور کرنے سے آپ کی دیوالی اور روشن ہو جائے گی۔

وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ تہوار کا حقیقی لطف تبھی ہے جب یہ کالا کم ہو۔ ہمارے گھروں میں مٹھائی، لباس اور تحفے کی جب ڈلیوری ہو تو ایک بار کی ڈلیوری آؤٹ کے بارے میں بھی سوچیں۔کم از کم ہمارے گھروں میں جو ڈھیر سارے ہیں، جس کو ہم کام میں نہیں لاتے ایسی چیزوں کی تو ڈلیورآؤٹ ضرور کریں۔

عالمی سیاحت اور سیاحت مقابلہ فہرست میں بھارت کی پوزیشن سدھرنے کا ذکر کرتے ہوئے مودی نے دیوالی کی چھٹیوں میں لوگوں سے ایک بار پھر کسی بھی سیاحتی مقام پر جانے کا اعلان کیا۔ انہوں نے کہا کہ 27 ستمبر کو عالمی سیاحت دن منایا گیا۔ اس موقع پر دنیا کی کچھ ذمہ دار ایجنسیوں نے سیاحت کی رینکنگ جاری کی ہے۔ عالمی سفر اور سیاحت مقابلہ انڈیکس میں بھارت نے بہت بہتر کیا ہے۔ بھارت اس فہرست میں اب 34 ویں مقام پر پہنچ گیا ہے جبکہ پانچ سال پہلے 65 ویں نمبر پر تھا۔ ایک قسم سے ہم بہت بڑی چھلانگ لگا چکے ہیں۔ اگر ہم نے کوشش کی تو آزادی کا 75 واں سال آتے آتے ہم سیاحت میں دنیا کے اہم مقامات میں اپنی جگہ بنا لیں گے۔

مودی نے کہا کہ 15 اگست کو انہوں نے لال قلعہ کی فصیل سے عوام سے 2022 تک بھارت کے کم از کم 15 مقامات پر جانے کا اعلان کیا تھا۔ انہوں نے ایک بار پھر سے گزارش کرتے ہوئے کہا کہ دیوالی کے تہوار میں چھٹیوں کے دنوں میں بھارت کے کسی بھی ایسی جگہ گھومنے جانے کا منصوبہ بنائیں،بھارت کو دیکھیں۔سمجھیں اور تجربہ کریں۔ ہمارے پاس کتنے مختلف اورالگ مقامات ہیں۔

وزیر اعظم مودی نے لتا منگیشکر کو 90 ویں سالگرہ کی مبارک باد دینے کے لئے فون کیا تھا۔ مودی نے من کی بات پروگرام میں اس گفتگو کو شیئر کرتے ہوئے اس کا مقصد واضح کیا اور کہا عمر کے اس پڑاؤ میں بھی لتا دیدی ملک سے منسلک تمام باتوں کی شوقین ہیں۔ وزیر اعظم نے طلباء کو امتحان کی کشیدگی سے بچنے کے لئے لکھی اپنی کتاب ’ایگزام واریرس‘ کے نئے ورژن کے لئے اساتذہ اور والدین سے ان کے تجربے کو شیئرکرنے کی اپیل کی۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *