پاکستانی دلہن کو ملی ہندوستان کی شہریت، لوک سبھا انتخابات میں ڈالیں گی ووٹ

Share Article

voters

13 سال کے طویل انتظار کے بعد پنجاب کے قادیان میں طاہرہ مقبول کو ہندوستان کی شہریت مل گئی.۔اب پاکستانی نژاد طاہرہ مقبول لوک سبھا انتخابات میں اپنے ووٹ کا حق استعمال کر پائیں گی۔ انہوں نے سال 2017 میں پنجاب میں ہوئے اسمبلی انتخابات میں پہلی بار ووٹ ڈالا تھا۔

پاکستان کے فیصل آباد سے تعلق رکھنے والی طاہرہ ظہور کی شادی پنجاب کے گرداس پور ضلع کے قادیان کے رہنے والے چودھری مقبول احمد کے ساتھ 7 دسمبر 2003 کو ہوئی تھی۔ طاہرہ اور احمد کے تین بچے ہیں۔ تقریبا 13 سال انتظار کرنے کے بعد انہیں ہندوستان کی شہریت مل پائی۔

قادیان میں طاہرہ احمدیہ مسلم خواتین کی ایک تنظیم سے بھی وابستہ ہیں۔ اس کے تحت وہ اسکولی بچوں کو پڑھانے اور خواتین کو بااختیار بنانے کے ساتھ ساتھ اور بہت سے سماجی کاموں میں حصہ لیتی ہیں۔ انہوں نے اپنے ایک پروگرام کے بارے میں بتاتے ہوئے کہا، ’ہم نوجوانوں کو سیل فونز کے استعمال کے فوائد اور نقصانات کے بارے میں بتاتے ہیں اور ہم اپنا پوائنٹ انہیں سمجھانے میں کامیاب بھی ہو رہے ہیں‘۔

طاہرہ کا کہنا ہے کی ان کی سماجی سرگرمیاں صرف احمدیہ بچوں کے لئے نہیں ہے بلکہ یہ ذات اور مذہب کے دائرے سے باہر ہے۔ انہوں نے بتایا، ہم نے حال ہی میں قادیان میں بیاہی گئیں پاکستانی نژاد کی دلہن کیلئے ایک سیشن کاانعقاد کیا تھا۔ اس میں ہم نے انہیں حق رائے دہی کے استعمال کے بارے میں بتایا۔ ساتھ ہی انہیں مرکز اور ریاست میں حکومت کی تشکیل میں شریک ہونے کی اہمیت کے بارے میں بھی جانکاری دی۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *