کانگریس سمیت 21 اپوزیشن جماعتوں کی میٹنگ، کہا- شہیدوں کی قربانی پرسیاست افسوسناک

Share Article

meeting-of-opposition

ہندوستان اور پاکستان کی سرحد پر کشیدہ حالات کے درمیان کانگریس اور کئی دیگراپوزیشن جماعتوں کی میٹنگ بدھ کوہوئی۔کانگریس سمیت ملک کے 21 اپوزیشن جماعتوں نے پاکستان کے بالاکوٹ میں دہشت گردانہ کیمپ پر فضائیہ کی کارروائی کی تعریف کرتے ہوئے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں مسلح افواج کے ساتھ کھڑے رہنے کی بات کہی۔ اس میٹنگ کے بعد کانگریس سمیت 21 اپوزیشن جماعتوں نے مشترکہ مشترکہ بیان جاری کیا۔اس بیان میں اپوزیشن جماعتوں نے کہا کہ حکمراں جماعت کے رہنماؤں کی طرف سے ہمارے جوانوں کی شہادت کا سیاست کرنے پر تمام رہنماؤں نے شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔اس میٹنگمیں سرحد پر موجودہ حالات اور پلوامہ دہشت گردانہ حملے کے بعد ہندوستانی فضائیہ کے ذریعے پاکستان کے بالاکوٹ میں دہشت گردانہ کیمپوں پر کی گئی بمباری پر اہم طور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔
بتا دیں کہ ہندوستان اور پاکستان کی سرحد پر کشیدہ حالات کے درمیان کانگریس اوردیگر اپوزیشن جماعتوں نے دہلی میں میٹنگ کی۔ اجلاس کے بعد جاری مشترکہ بیان میں پاکستان کی طرف سے اس سپانسر دہشت گردی کی مذمت کی گئی۔اپوزیشن جماعتوں نے کہا کہ وہ دہشت گردی کے خلاف فیصلہ کن جنگ میں اپنے مسلح افواج اور فوج کے تئیں یکجہتی کی قرارداد دہراتے ہیں۔پہلے یہ میٹنگ اپوزیشن جماعتوں کے درمیان لوک سبھا انتخابات کے لئے کم از کم مشترکہ پروگرام طے کرنے کے لئے ہونی تھی، لیکن اس میٹنگ میں کوئی بحث نہیں ہوئی۔ اپوزیشن جماعتوں نے کہا کہ ہمیں فوج کی کارروائی پر فخر ہے۔

پارلیمنٹ کی لائبریری بلڈنگ میں ہوئی اس میٹنگ میں یو پی اے سربراہ سونیا گاندھی، سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ، کانگریس صدر راہل گاندھی، پارٹی کے سینئر لیڈر احمد پٹیل، تیلگو دیشم پارٹی کے سربراہ این چندرا بابو نائیڈو، ترنمول کانگریس کی لیڈر ممتا بنرجی، نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کے شرد پوار، سی پی ایم کے جنرل سکریٹری سیتا رام یچوری، عام آدمی پارٹی کے سنجے سنگھ اور بہت سے دوسرے اپوزیشن پارٹیوں کے لیڈر شامل ہوئے۔اس کے علاوہ جھارکھنڈ مکتی مورچہ کے شیوسورین،اپیندرکشواہا، جھارکھنڈ وکاس مورچہ کے اشوک کمار، ’ہم ‘ کے جیتن رام مانجھی، ٹی جے ایس کے کوڈاندرم، جد(ایس ) کے کنوردانش علی، کیرل کانگریس(ایم) کے کے جوس منی اوردیگراپوزیشن پارٹیوں کے لیڈران نے بھی میٹنگ میں شرکت کی۔

وہیں ہندوستان۔پاکستان سرحد پر کشیدہ حالات کو دیکھتے ہوئے کانگریس نے اپنی اولین پالیسی اکائییونٹ کانگریس ورکنگ کمیٹی (سی ڈبلیو سی) کی جمعرات کو مجوزہ میٹنگ ملتوی کر دی ہے۔پارٹی کے مرکزی ترجمان رندیپ سرجیوالا کے مطابق قومی سلامتی سے منسلک حالات کے پیش نظر کانگریس صدر راہل گاندھی نے سی ڈبلیو سی کی میٹنگ کے ساتھ ہی عوامی جلسہ بھی ملتوی کیا ہے۔ یہ دونوں پروگرام جمعرات کو احمد آباد میں ہونے تھے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *