ایوان بالا میں حزب اختلاف نے جب امت شاہ کو گھیرا تو روک دی گئی راجیہ سبھا ٹی وی کی نشریات

Share Article

شہریت ترمیمی بل لوک سبھا میں پاس ہونے کے بعد بدھ کو اس راجیہ سبھا میں پیش کیا گیا۔ ایوان میں اس بل پر بحث کے دوران راجیہ سبھا ٹی وی نے نشر یات کوکچھ دیر کے لئے بند کردی۔ دراصل وزیر داخلہ امت اس بل کو لے کر کہہ رہے تھے کہ یہ آسام کے لوگوں کے مفاد میں ہے۔ وزیرداخلہ کے ان دلیلوں کے دوران حزب اختلاف نے ان کو گھیرنا شروع کیاتو راجیہ سبھا ٹی وی نے نشر یات کوتھوڑی دیر کے لئے بند کردی۔

Image result for Opposition in the upper house when Ummah Shah was slammed by Rajya Sabha TV broadcasts
میڈیارپورٹ کے مطابق وزیر داخلہ امت شاہ نے بدھ کو شہریت ترمیمی بل بحث اور پاس کرانے کے لئے راجیہ سبھا میں پیش کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کے مسلمان ہندوستانی شہری تھے، ہیں اور بنے رہیں گے،پاکستان، بنگلہ دیش اور افغانستان کے غیر مسلم تارکین وطن کو بھارتی شہریت فراہم کرنے کے ضابطے والے اس بل کو پیش کرتے ہوئے ایوان بالا میں وزیر داخلہ نے کہا کہ ان تینوں ممالک میں اقلیتوں کے پاس برابر کے حقوق نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان ممالک میں اقلیتوں کی آبادی کم از کم 20 فیصد کم ہوئی ہے۔ اس کی وجہ سے ان کا صفایا، بھارت میںیا کہیں اور منتقل ہوگئے ہیں۔ شاہ نے کہا کہ ان مہاجرین کے پاس روزگار اور تعلیم کے حقوق نہیں تھے۔

Image result for Opposition in the upper house when Ummah Shah was slammed by Rajya Sabha TV broadcasts
شاہ نے کہا کہ بل میں تشدد کا شکار ہوئے اقلیتوں کو شہریت فراہم کرنے کا انتظام ہے۔اس بل میں افغانستان، بنگلہ دیش اور پاکستان سے آئے ہندو، سکھ، بودھ ، جین، پارسی اور عیسائی پناہ گزینوں کو شہریت دینے کا قانون ہے۔ اس بل کو پیر کو لوک سبھا نے منظورکیا ہے۔ایوان بالا میں کئی اپوزیشن ارکان نے اس بل کو سلیکٹ کمیٹی میں بھیجنے کے لئے نوٹس دیا ہے۔بل پر بحث کے بعد اس کو پاس وقت کرتے وقت ان تجاویزکے بارے میں فیصلہ کیا جائے گا۔ شاہ نے اس بل کے مقصدوں کو لے کر ووٹ بینک کی سیاست کے اپوزیشن کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ بی جے پی نے 2019 کے عام انتخابات کے لئے اپنے منشور میں اس کا اعلان کیا تھا اور پارٹی کو اسی پر کامیابی ملی تھی۔ انہوں نے کہا کہ مسلمانوں کو فکر کرنے کی کوئی ضرورت نہیں ہے کیونکہ وہ بھارت کے شہری ہیں اور رہیں گے۔

Image result for Opposition in the upper house when Ummah Shah was slammed by Rajya Sabha TV broadcasts
شاہ نے کہا کہ بی جے پی آسام کے لوگوں کے مفادات کی حفاظت کرے گی۔ وزیر داخلہ جب آسامی لوگوں کے مفادات کی حفاظت کی بات کر رہے تھے تو راجیہ سبھا کا ٹی وی نشریات کچھ وقت کے لئے روک دیا گیا کیونکہ اپوزیشن ارکان نے درمیان میںان کو گھیرنے کی کوشش شروع کر دی۔اس بل میں پڑوسی ممالک کے مسلم تارکین وطن کو شہریت فراہم کرنے کا انتظام نہیں ہے جس کی وجہ سے ملک کے مختلف حصوں میں احتجاج ہو رہا ہے۔ نو سو سائنسدانوں اور دانشوروں نے ایک مشترکہ بیان جاری کر کہا ہے کہ ہندوستانی شہریت کے تعین کے لئے مذہب کو قانونی بنیاد بنایا جانا بہت ہی پریشان کرنے والا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *