OMG :یہ خاتون ڈاکٹر سارے کپڑے اتار کر کرتی ہے مریضوں کاعلاج

Share Article
dr-pic3
ویسے تو ڈاکٹر کا ذکر ہونے پر آپ کے دماغ ایکشبیہ بنتی ہے۔سفید کوٹ پہنے ہوئے ایک شخص جس کے گلے میں stethoscope کے لٹکتا رہتا ہے۔ لیکن، یہ خاتون ڈاکٹر اس شبیہ کے بالکل برعکس ہے۔جیساکہ آپ سب جانتے ہیں کہ اس زمین پر ڈاکٹر کو خدا کا روپ ماناجاتاہے۔ ڈاکٹروں کو لے کر معاشرے میں ایک شبیہ بنی ہوئی ہے۔ لیکن، اب یہ شبیہ آہستہ آہستہ ختم ہوتی جا رہی ہے۔
Screen-Shot-2014-07-30-at-6
وہیں سب یہ بھی جانتے ہیں کہ ڈاکٹروں کا اپنے مریضوں کے علاج کرنے کا اپنا الگ ہی طریقہ ہوتا ہے۔ جس کی مدد سے وہ مریض کی بیماری کے بارے میں جان کر ان کا اچھے سے علاج کر سکیں۔ ہر کسی کا مختلف اور منفرد انداز ہوتا ہے جس سے مریض ٹھیک بھی ہوتے ہیں۔ لیکن آج آپ کو جس ڈاکٹر کے بارے میں بتانے جا رہے ہیں جس کے بارے میں جان کر آپ بھی دنگ رہ جائیں گے!
dr0
جی ہاں!ویسے کیا آپ نے کبھی سنا ہے کوئی خاتون ڈاکٹر اپنے کپڑے اتار کر مریضوں کا علاج کرتی ہو۔ آج ہم آپ کو ایسے ہی ایک ڈاکٹر کے بارے میں بتانے جا رہے ہیں۔ جس سے ملنے کے لئے لوگ قطارلگائے کھڑے رہتے ہیں۔ہو بھی کیوں نہ یہ ڈاکٹر لوگوں کا بغیر ملبوس علاج جو کر رہی ہے۔
dr-pic2
یہ پورا معاملہ امریکہ کے نیویارک میں رہنے والی 24 سالہ سارہ وائٹ ایک ڈاکٹر ہے۔ یہ ایک ماہر نفسیات ہے۔یہ ڈاکٹر اسپتال میں آئے مردوں کا علاج کرتے وقت نیم برہنہ ہو جاتی ہے۔
dr-pic1
خاص بات یہ ہے کہ وہ نیوڈ(عریاں) تھراپی کے ذریعے مردوں کو جنسی مایوسی سیباہر نکالتی ہے۔ان کی یہ تھراپی سوشل میڈیا پر کافی وائرل ہو رہی ہے اور کئی لوگ اس کے بارے میں جانتے بھی ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ وہ دنیا کے عظیم ڈاکٹر فرایڈ کی تھیوری کے مطابق علاج کر رہی ہیں۔

ساتھ ہی ان کا کہنا ہے کہ ایسا کر کے وہ مردوں کے ذہنوں میں دبی ہوئی جنسی خواہشات کو باہر نکالنے میں کامیاب ہو جاتی ہیں۔ لیکن یہ ٹریٹمنٹ وہ آن لائن کرتی ہیں۔ وہ مریضوں کے علاج کے لئے ویب کیم کا استعمال کرتی ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *