پیشگی ضمانت کے خلاف ای ڈی کی درخواست پر چدمبرم کو نوٹس

Share Article

 

نئی دہلی، دہلی ہائی کورٹ نے ایئر سیل-میکسس ڈیل معاملے میں سابق وزیر خزانہ پی چدمبرم اور ان کے بیٹے کارتی چدمبرم کو ٹرائل کورٹ سے ملی پیشگی ضمانت کے خلاف ای ڈی کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے چدمبرم کو نوٹس جاری کیا ہے۔

گزشتہ 5 ستمبر کو دہلی کی راؤز ایونیو کورٹ نے اس معاملے میں چدمبرم اور ان کے بیٹے کارتی چدمبرم کو پیشگی ضمانت دے دی تھی۔ گزشتہ 6 ستمبر کو ٹرائل کورٹ نے اس معاملے کی سماعت غیر معینہ مدت تک ٹال دی تھی۔ سماعت کے دوران جب دونوں جانچ ایجنسیوں نے سماعت ملتوی کرنے کی کوشش کی تب اسپیشل جج اوپی سینی ناراض ہو گئے ۔انہوں نے کہا کہ آپ ہمیشہ سماعت ملتوی کرنے کا ہی مطالبہ کرتے ہیں۔ جب آپ کی جانچ پوری ہو جائے، تب کورٹ سے رابطہ کیجئے گا۔جب آپ کو دوسرے ممالک درخواست کا جواب مل جائے، تب کورٹ کو مطلع کیجئے گا۔

گزشتہ 2 ستمبر کو سی بی آئی اور ای ڈی نے اسپیشل جج اوپی سینی سے کہا تھا کہ پی چدمبرم اور کارتی چدمبرم کی حراست میں لے کر پوچھ گچھ ضروری ہے۔ سی بی آئی اور ای ڈی دونوں نے کہا تھا کہ پی چدمبرم اورکارتی چدمبرم تحقیقات میں تعاون نہیں کر رہے ہیں۔ چدمبرم نے اپنے عہدے کا غلط استعمال کرتے ہوئے ایئر سیل-میکسس ڈیل کی منظوری دی۔ دونوں کو اگرضمانت دی گئی تو وہ جانچ کو متاثر کر سکتے ہیں۔

26 نومبر 2018 کو سی بی آئی اور ای ڈی نے کورٹ کو بتایا تھا کہ مرکزی حکومت نے ایئر سیل-میکسس ڈیل معاملے میں سی بی آئی اور ای ڈی کی جانب سے دائر مقدمات میں سابق مرکزی وزیر پی چدمبرم کے خلاف مقدمہ چلانے کی اجازت دے دی ہے۔ 23 نومبر 2018 کو پی چدمبرم اورکارتی چدمبرم نے پٹیالہ ہاؤس کورٹ میں جواب داخل کیا تھا۔ وکیل ارشدیپ نے دونوں کی جانب سے جواب داخل کرتے ہوئے سی بی آئی اور ای ڈی کے الزامات سے انکار کیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *