نشنک اور ہرک پر تنازع کا سایہ

Share Article

راج کمار شرما 

p-10bیہ بات اب صاف ہوگئی ہے کہ بی جے پی اور کانگریس دونوں میں کوئی بھی دودھ کا دھلا ہوا نہیں ہے۔ دونوں قومی پارٹیوں کے داغدار لیڈر انتخابی میدان میں ہیں۔ بی جے پی اور کانگریس نے اس لوک سبھا انتخاب میں دو ایسے لیڈروں کو میدان میں اتارا ہے، جو ہمیشہ اپوزیشن کے نشانے پر رہے ہیں۔ بی جے پی لیڈر رمیش پوکھریال نشنک کو ہری دوار میں رینوکا راوت کے سامنے اور کانگریس کے ڈاکٹر ہرک سنگھ راوت کو پوڑی سے جنرل بھُون چندر کھنڈوری کے مقابلے میں اتارا گیا ہے۔ ان دونوں لیڈروں (نشنک۔ہرک) کا تنازع سے گہرا رشتہ رہا ہے۔ رمیش پوکھریال نشنک بی جے پی حکومت کے دورمیں ہوئی بدعنوانی، تو ہرک سنگھ راوت ذاتی زندگی سے لے کر بدعنوانی تک کے الزامات میں گھرے رہے ہیں، اس لیے ان دونوں امیدواروں کو لے کر دونوں پارٹیوں کو ایک دوسرے پرنشانہ سادھنے کا موقع مل رہا ہے۔ رمیش پوکھریال نشنک کی تو پی ایچ ڈی کی ڈگری ہی متنازع رہی ہے۔
الزام ہے نشنک پی ایچ ڈی کیے بغیر فرضی طور پر اپنے نام کے آگے ڈاکٹر لکھتے چلے آرہے ہیں۔ پچھلے اسمبلی انتخاب میں کانگریس نے ان کی مدت کار میں ہوئی بدعنوانی کے کئی معاملوں کو ایشو بنایا تھا۔ یہاں تک کہ کانگریس نے جن 419 گھوٹالوں کی چارج شیٹ صدر جمہوریہ کو سونپی تھی، ان میں زیادہ تر نشنک کے دور کے تھے۔ اسٹرڈیا زمین گھوٹالہ، 56ہائیڈرو پروجیکٹس کا الاٹمنٹ، ڈیزاسٹر اور ہری دوار کا کنبھ گھوٹالہ وغیرہ معاملوں کو لے کر کانگریس، بی جے پی خاص طور سے نشنک کو گھیرتی رہی ہے۔ یہ معاملے اترا کھنڈ کے جانے مانے فوک سنگر نریندر سنگھ نیگی نے اپنے گیتوں کے ذریعہ بھی اٹھائے تھے۔
دیکھنا یہ ہے کہ ان معاملوں کو ہری دوار میں کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے امیدوار ایشو بنا پاتے ہیں یا نہیں۔ پوڑی سے کانگریس کے امیدوار ہرک سنگھ راوت، تیواری سرکار کے دور میں ریوینو منسٹر تھے، لیکن جینی کیس میں پھنسنے کے بعد انھیں استعفیٰ دینا پڑا تھا، بعد میں سی بی آئی کی جانچ میں وہ اس الزام سے بری ہو گئے تھے۔ 2007میں جب ہرک سنگھ اپوزیشن لیڈر بنے، تو ان پر وکاس نگر میں قریب 100بیگھہ زمین غلط طریقہ سے ہتھیانے کا الزام لگا۔ وزیر زراعت بننے کے بعد وہ محکمہ تعلیم کی اجازت کے بغیر ایک بی ای او دمینتی راوت اور ایک رشتہ دار پرنسپل یشونت سنگھ راوت کو محکمہ زراعت میں لانے اور وزیر ہونے کے باوجود ترائی بیج وکاس نگم، ایکس سروس مین ویلفیئر کارپوریشن میں منافع بخش عہدہ لینے کے معاملے میںتنازع میں رہے۔

بہوگنا سرکار کے زمانے میں ان کی رہائش گاہ پر ہوئی ایک دعوت میں کانگریسی ایم ایل اے کنور پرنوچمپئن نے کانگریسی لیڈر وویکانند کھنڈوڈی پر گولی چلادی تھی۔ یہ معاملہ بھی کافی سرخیوں میں رہا۔ پوڑی میں بی جے پی اور دیگر پارٹیاں ان سب معاملوں کو لے کر ہرک سنگھ کو گھیرنے کی تیاری میں ہیں۔ نشنک کو بھروسہ ہے کہ مودی لہر کے چلتے دھرم نگری ہری دوار میں ان کے سبھی داغ دھل جائیں گے، جبکہ ہریش راوت کی بیوی رینوکاراوت کو شوہر کے زمینی لیڈر ہونے کا فائدہ ملنے کی امید ہے۔ نشنک کوسہ رخی لڑائی کے ساتھ ساتھ پارٹی کا اندرونی انتشار بھی جھیلناپڑ رہا ہے…

اس کے علاوہ پی آر او یدھ ویرقتل کیس میں ہرک سنگھ کا نام اچھلنے پر بھی اس وقت کی سرکار کو اپوزیشن کا حملہ برداشت کرنا پڑا۔ کچھ ماہ پہلے ایک مقامی گلوکارہ سے بھی ان کا نام جوڑا گیا۔
بہوگنا سرکار کے زمانے میں ان کی رہائش گاہ پر ہوئی ایک دعوت میں کانگریسی ایم ایل اے کنور پرنوچمپئن نے کانگریسی لیڈر وویکانند کھنڈوڈی پر گولی چلادی تھی۔ یہ معاملہ بھی کافی سرخیوں میں رہا۔ پوڑی میں بی جے پی اور دیگر پارٹیاں ان سب معاملوں کو لے کر ہرک سنگھ کو گھیرنے کی تیاری میں ہیں۔
نشنک کو بھروسہ ہے کہ مودی لہر کے چلتے دھرم نگری ہری دوار میں ان کے سبھی داغ دھل جائیں گے، جبکہ ہریش راوت کی بیوی رینوکاراوت کو شوہر کے زمینی لیڈر ہونے کا فائدہ ملنے کی امید ہے۔ نشنک کوسہ رخی لڑائی کے ساتھ ساتھ پارٹی کا اندرونی انتشار بھی جھیلناپڑ رہا ہے، جبکہ ہرک سنگھ کے حامیوں کا کہنا ہے کہ انھیں نوجوان ہونے کا فائدہ ہو رہا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *