نربھیا اسکینڈل کی تحقیقات کرنے والی ڈی سی پی کو پروقار اعزازسے نوازا

Share Article

 

راجدھانی دہلی سمیت پورے ملک میں سنسنی پھیلا دینے والے سال -2012 کے سرخیوں میں رہے نربھیا گینگ ریپ کیس کو ریکارڈ وقت میں حل کرنے والی دہلی پولیس کی اس وقت کی جنوبی ضلع کی ڈپٹی کمشنر رہیں آئی پی ایس افسر چھایا شرما کو بین الاقوامی اعزاز سے نوازا گیا ہے۔ امریکہ میں منعقدہ ایک تقریب میں انہیں ایریزونا اسٹیٹ یونیورسٹی نے ’مکین انسٹی ٹیوٹ فار انٹرنیشنل لیڈرشپ -2019 ‘سے نوازا ہے۔

 

Image result for chhaya sharma dcp south delhi award

نربھیا واقعہ کے دورا ن چھایا شرما جنوبی دہلی کی ڈپٹی کمشنر تھیں۔ نیٹ فلکس پر نشر رچی مہتا کی سیریز ‘دہلی کرائم’ میں چھایا شرما کے کردار کا نام ورتیکا چترویدی رکھا گیا ہے۔ مہتا کے مطابق بغیر چھایا شرما کے نربھیا اسکینڈل کی کہانی کچھ اور ہی ہوتی۔ اس واردات کے بعد چھایا شرما نربھیا کو دیکھنے پہنچنے والی پہلی پولیس افسر تھیں۔ یہی نہیںچھایانے اس میں شامل تمام ملزمین کو پانچ دن کے اندر اندر دھر دبوچا تھا۔ خاص بات یہ ہے کہ جب تک کیس نہیں سلجھا، تب تک وہ گھر نہیں گئی تھیں۔ چھایا شرما نے بتایا کہ یہ پروقار ایوارڈ ملنا ان کے لئے فخر کی بات ہے۔

 

انڈین پولیس سروس میں یوٹی کیڈر کی افسر چھایا شرما کی شبیہ ایک تیز طرار خاتون آئی پی ایس کے طور پر ہے۔ انہوں نے اپنے کیریئر کے 19 سال کے دوران کئی سنگین جرائم کو نمایاں طور پر کم وقت یا کہیں کہ ریکارڈ وقت میں حل کیا ہے۔ عورتوں اور بچوں کے خلاف جرائم روکنے میں ان کاقابل ستائش کردار رہا۔ فی الحال ان کی تعیناتی قومی انسانی حقوق کمیشن میں ڈپٹی انسپکٹر جنرل کے طور پر ہے۔

 

واضح ہو کہ امن کا نوبل اعزاز پانے والی ملالہ یوسف زئی کو بھی یہ اعزاز دیا جا چکا ہے۔ یہ ایوارڈ ہر سال دیا جاتا ہے۔ اسے بنیادی قدروں کے لئے کسی شخص یا گروپ کے ذریعہ کئے گئے نمایا کاموں کے اعتراف میں فراہم کیا جاتا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *