مہاراشٹرمیں ریزرویشن کیلئے60 مسلم تنظیموں نے ایک فورم تشکیل کی

Share Article
Reservation-for-muslims
مہاراشٹرمیں مراٹھاریزرویشن کولیکرجاری آندولن کے بیچ اب ریاست کے مسلمانو ں نے بھی ریزرویشن کیلئے اپنے مطالبہ کوتیزکردیاہے۔مہاراشٹر میں مراٹھا سماج کے بعد اب مسلم سماج بھی ریزرویشن کی مانگ کو لے کر جارحانہ ہو گیا ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق،ریاست کی 60 مسلم تنظیموں نے ایک فورم کی تشکیل دی ہے۔ مسلم معاشرہ گزشتہ کچھ سالوں میں پانچ فیصدی ریزرویشن کی مانگ کر رہا ہے، لیکن یہ پہلا موقع ہے جب اتنی بڑی تعداد میں تنظیموں نے حکومت کے خلاف مورچہ کھول دیا ہے۔
مسلم معاشرہ بھی اب ریزرویشن کے لئے موبیلائز ہونا شروع ہو گیا ہے۔ مراٹھا سمیتی کی طرز پر اب مسلم ریزرویشن مشترکہ کمیٹی کا قیام کیا گیا ہے۔ کانگریس کے راجیہ سبھا رکن حسین دلوئی نے بتایا کہ مسلم سماج طویل عرصہ سے ریزرویشن کی مانگ کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب قانونی طور پر ریزرویشن کی لڑائی لڑی جائے گی۔
در اصل، کانگریس اور این سی پی سرکار نے سال 2014 میں انتخابات سے ٹھیک قبل مراٹھا ریزرویشن کے ساتھ مسلمانوں کو بھی تعلیم اور روزگار میں پانچ فیصد ریزرویشن دیا تھا۔ بعد میں یہ معاملہ عدالت میں پہنچ گیا۔ عدالت نے روزگار میں پانچ فیصدی ریزرویشن پر روک لگا دی تھی، لیکن تعلیم میں ریزرویشن پر کوئی روک نہیں لگی۔ مسلمانوں نے مطالبہ کیاہے کہ ریاستی سرکارانہیں نوکریوں اورتعلیم میں 5فیصدریزرویشن دے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *