ائیر اسٹرائک پر امت شاہ کا بڑا بیان ،کہا حملے میں 250سے زیادہ دہشت گرد مارے گئے

Share Article

amit-shah

احمد آباد: حکومت کی طرف سے پاکستان پر کئی گئی ایئر اسٹرائک پر بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ پہلی بار کوئی اعداد و شمار بتایا ہے۔ پلوامہ حملے کے انتقام میں کئے گئے حملے کے بعد پاکستان ہوئی ایئر اسٹرائک کو لے کر بڑا بیان دیا ہے۔ امت شاہ نے احمد آباد میں کہا کہ اس ایئر اسٹرائک میں 250 سے زیادہ دہشت گرد مارے گئے ہیں۔امت شاہ نے اپوزیشن کو بھی آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ ممتا۔راہل سستی سیاست کرنے سے بچیں۔

امت شاہ نے کہا، ’پلوامہ حملے کے تمام کو لگا کہ اس بار سرجیکل اسٹرائک نہیں ہو سکتی، اس بار کیوں ہو گا؟ اس وزیر اعظم مودی کی حکومت نے 13 ویں دن ایئر اسٹرائک کی جس میں 250 سے زیادہ دہشت گرد مارے گئے۔‘

بتا دیں کہ 26 فروری کو پاکستان کی سرحد میں گھسے فضائیہ نے جیش محمد کے ٹھکانوں کو تباہ کیا تھا۔ فضائیہ نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ ان کے نشانے ہدف پر لگے ہیں، جو وہ کرنا چاہتے تھے وہ کیا ہے۔ تاہم، کسی طرح کے اعداد و شمار جاری نہیں کیا تھا۔

ائیر اسٹرائک کے بعد سے ہی غیر ملکی میڈیا سمیت اپوزیشن پارٹیوں کے لیڈروں نے ایئر اسٹرائک کے ثبوتوں کا مطالبہ کیا ہے۔ کانگریس لیڈر دگ وجے سنگھ نے اتوار کو اپنے بیان میں کہا تھا کہ جس طرح امریکہ نے اسامہ بن لادن کے قتل کے ثبوت جاری کئے تھے، اسی طرح حکومت ہند کو ایئر اسٹرائک کی معلومات سامنے رکھنی چاہئے۔صرف دگوجے سنگھ ہی نہیں بلکہ مغربی بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی نے بھی مرکزی حکومت سے ایئر اسٹرائک کے ثبوت سامنے رکھنے کی بات کہی تھی۔ اپوزیشن کے ان سوالوں پر وزیر اعظم نریندر مودی کئی بار اپنی رائے دے چکے ہیں۔

اتوار کو ہی پٹنہ ریلی میں پی ایم مودی نے کہا تھا کہ اپوزیشن کے کچھ لوگ اس قسم کے سوال اٹھا رہے ہیں، جس سے پاکستان کی پارلیمنٹ، میڈیا کو فائدہ مل رہا ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ اس طرح کے بیان سے فوج کے حوصلے کو توڑنے کا کام کیا جا رہا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *