وارانسی میں ہوگی مودی کی تاریخی شکست: مایاوتی

Share Article

mayawati

لکھنؤ:بی ایس پی کی سربراہ مایاوتی نے وزیر اعظم مودی پر ایک بار پھر حملہ بولا ہے۔ انہوں نے کہا، ”وزیر اعظم مودی کا گجرات ماڈل یو پی کے پوروانچل کی بھی غریبی، بے روزگاری اور پسماندگی کو دور کرنے میں کامیاب نہیں ہو سکتا، جو سخت وعدہ خلافی ہے۔ مودی-یوگی کی ڈبل انجن والی حکومت نے ترقی کے بجائے فرقہ وارانہ جنون، نفرت اور تشدد ہی اس ملک کو دیا ہے جو انتہائی افسوسناک ہے۔
انہوں نے مزید کہا، ”پوروانچل کے ساتھ یہ وعدہ خلافی اور دھوکہ دہی جب ہوئی جب وزیر اعظم مودی اور اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ اسی علاقہ کی نمائندگی کرتی ہیں۔ یوگی کو تو گورکھپور نے ٹھکرا دیا ہے، تو کیا ایسے حالات میں مودی کی جیت سے زیادہ وارانسی میں ان کی ہار تاریخی نہیں ہوگی؟ کیا وارانسی 1977 کا رائے بریلی دوہرائے گا؟“قبل ازیں، جمعرات کو مایاوتی نے بنگال کے تشدد کو لے کر وزیر اعظم اور امت شاہ کو ہدف تنقید بنایا تھا۔ انہوں نے کہا تھا، ”ملک میں جب سے لوک سبھا انتخابات کا اعلان ہوا ہے تبھی سے بالخصوص بنگال میں آئے دن کوئی نہ کوئی واقعہ پیش آجاتا ہے جس کے لئے بی جے پی اور آر ایس ایس کے لوگ ذمہ دار ہیں۔“انہوں نے مزید کہا، ”اس انتخاب میں جہاں تک بنگال میں آئے دن انتخابی تشدد اور وبال وغیرہ ہونے کا سوال ہے تو یہ واضح ہے کہ وزیر اعظم مودی اور ان کے چیلے امت شاہ کی قیادت میں ان کی پوری پارٹی نے سوچی سمجھی سازش کے تحت ممتا بنرجی حکومت کو نشانہ پر لیا ہوا ہے۔“

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *