راشٹرپتی بھون میں ایم ٹی ایس کی نوکری دلانے کے نام پر لاکھوں کی دھوکہ دہی، تین گرفتار

Share Article

راشٹرپتی بھون میں ملٹی ٹاسکنگ اسٹاف(ایم ٹی ایس) کی نوکری دلانے کے نام پردھوکہ دہی کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ معلومات کے مطابق راشٹرپتی بھون میں ایم ٹی ایس کی نوکری دلوانے کے نام پر وویک، اکشے اوردیپک سے ٹھگی کی واردات کو انجام دیا گیا۔ ان سے ایم ٹی ایس کی نوکری دلوانے کیلئے تقریباً ساڑھے آٹھ لاکھ روپے مانگے گئے تھے۔ روپے مانگنے والے تینوں ملزمین مونووید ، موتی لال اور ہیڈ کانسٹیبل ہریندر کو کرائم برانچ نے گرفتار کیا ہے۔

مونو ویداور موتی لال راشٹرپتی بھون میں ملازم تھے، جبکہ ایک ملزم ہریندر سنگھ دہلی پولیس میں بطورہیڈ کانسٹیبل ملازم ہے۔ وہ بھی پہلے راشٹرپتی بھون میں تعینات تھا۔ ان تینوں کو پولیس نے بدھ کے روز گرفتار کیا۔ پولیس کے مطابق ان میں سے ایک ملزم کے بینک اکاؤنٹ میں پولیس کو 17 لاکھ روپے ملے ہیں جبکہ دوسرے کے بینک اکاؤنٹ میں 40 لاکھ روپے ملے ہیں۔ موتی لال کے واقف کارسے لی گئی رقم کو وہ مونو کے بینک اکاؤنٹ میں جبکہ مونو کے واقف کارسے لی گئی رقم کو موتی لال کے بینک اکاؤنٹ میں جمع کرواتے تھے۔

 

متاثرہ شخص نے کی تھی راشٹرپتی بھون میں شکایت
مذکورہ معاملے میں متاثرہ وویک کے والد ستیش نے راشٹرپتی بھون میں شکایت دی تھی۔ شکایت میں بتایا تھا کہ اس کے خاندان کے 2 لوگوں کو ایم ٹی ایس کی نوکری دلانے کے نام پر موتی لال اور مونووید نے آٹھ آٹھ لاکھ روپے مانگے تھے۔ ان سے یہ رقم لینے کے بعد راشٹرپتی بھون میں ان کا انٹرویو لیا گیا۔ اس کے علاوہ وہاں کی ڈسپنسری میں ان کامیڈیکلبھی کروایا گیا تاکہ انہیں یہ یقین ہو کہ ان کے ساتھ کسی قسم کی ٹھگی نہیں ہو رہی ہے۔ اس کے بعد ٹھگ نے متاثرین کو فرضی تقرری لیٹر بھی دے دیا۔ وہ جب راشٹرپتی بھون میں یہ تقرری خط لے کر پہنچے تو وہاں پتہ چلا کہ یہ لیٹرجعلی ہیں۔ اس پر انہوں نے اس پورے معاملے کی شکایت کی۔

 

ساؤتھ ایونیو تھانے میں درج ہوا کیس
مذکورہ معاملے میں ایف آئی آر درج کر موتی لال کو ساؤتھ ایونیو پولیس نے گرفتار کر لیا تھا۔ اس سے ہوئی پوچھ گچھ کے بعد معاملے کی جانچ کرائم برانچ کو سونپ دی گئی۔ کرائم برانچ کو پوچھ گچھ میں پتہ چلا کہ اس جعل سازی میں اس کے علاوہ مونو وید اورہیڈ کانسٹیبل ہریندر سنگھ بھی شامل ہے۔ ہریندر کو پوچھ گچھ کے لئے کرائم برانچ نے بلایا۔ تفتیش میں اس نے بتایا کہ متاثرین کو یقین دلانے کے لئے اس کی مدد لی گئی تھی، جس کے بعد اسے بدھ کو گرفتار کر لیا گیا۔ اس کے بعد مونو وید کوبھی گرفتار کر لیا گیا۔

 

جوائنٹ سکریٹری بن کر لیا انٹرویو
کرائم برانچ کے ڈپٹی کمشنر راجیش دیو کے مطابق جانچ پڑتال کرنے پر پتہ چلا کہ راشٹرپتی بھون میں منعقد کئے گئے انٹرویو میں وہاں موجود ایم ٹی ایس راہل نے جوائنٹ سکریٹری بن کر ان کا انٹرویو لیا تھا۔ اس کے بعد پولیس نے راہل کو بھی گرفتار کر لیا۔ اس نے کرائم برانچ کو بتایا کہ وہ گریجویٹ ہے۔ اسے اچھی انگریزی بولنی آتی ہے۔ اس کی وجہ سے ملزمین نے اسے انٹرویو لینے کے لئے کہا تھا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *