مایاوتی نے دلتوں کو ووٹ ڈالنے سے روکنے کا الزام لگایا، ای وی ایم کی خرابی روکے کمیشن

Share Article

 

بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے مغربی اتر پردیش کے آٹھ لوک سبھا حلقوںمیں ہوئی ووٹنگ کے دوران ای وی ایم مشینوں میں پھر ایک بار بی جے پی کے حق میں آئی خرابی کو انتہائی سنگین مسئلہ بتایا ہے۔ انہوں نے جمعہ کے روزالیکشن کمیشن سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ان بے ضابطگیوں کی مکمل سنجیدگی سے نوٹس لے کر اس کا حل نکالے تاکہ اگلے مراحل میں لوگوں کو ایسی کوئی شکایت نہیں ملے۔

 

 

مایاوتی نے الزام لگایا ہے کہ ووٹنگ کے دوران کئی جگہوں پر پولیس فورس کا استعمال کرتے ہوئے خاص طور سے دلت سماج کے لوگوں کو پولنگ بوتھ پر پہنچنے سے روکا گیا۔ اس طرح اعلیٰ سطح کے دباؤ میں آکر پولیس کی طرف سے طاقت کے استعمال کرکے ووٹ نہ ڈالنے دینا یہ جمہوریت کا گلا گھونٹ کر قتل کرنے کے ہی برابر ہے۔ انہوں نے کہا کہ بابا صاحب ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر طرف سے آئین میں دلت سماج کے لوگوں کو ووٹ ڈالنے کا برابر کا حق دیا گیا ہے، یہ اس چھینے جانے کی مجرمانہ کوشش بھی ہے۔

 

Image result for mayawati and dalits

 

بی ایس پی سپریمو نے کہا کہ اس پر اگر الیکشن کمیشن کوئی سخت اور سنجیدہ قدم فوراً نہیں اٹھاتا ہے تو فی الحال چل رہے لوک سبھا کے عام انتخابات کا کوئی مطلب ہی نہیں رہ جائے گا اور چونکہ بہوجن سماج پارٹی کو الیکشن کمیشن پر مکمل ایمان اور بھروسہ ہے، اس لئے ہم امید کرتے ہیں کہ وہ اس پر ضرور جلد ہی سخت قدم اٹھائے گا۔

 

 

مایاوتی نے کہا کہ اتر پردیش کی پولیس و انتظامیہ کے ذریعہ اپنی طاقت کا غلط استعمال کیا جا رہا ہے اور کئی بوتھوں میں ای وی ایم میں خرابی پائی گئی، جس کا نتیجہ تھا کہ بٹن تو ہاتھی کا دبایا جا رہا تھا پر ووٹ کمل (بی جے پی) پر پڑ رہا تھا۔
انہوں نے کہا کہ ای وی ایم میں پائی گئی خرابی تو اتنی زیادہ سنگین تھی کہ مسلسل ایک کے بعد ایک ووٹ یعنی کی ووٹ جو ہاتھی انتخابی نشان پر ڈالے جا رہے تھے وہ کمل (بی جے پی کے انتخابی نشان) پر پڑ رہے تھے۔ اس طرح کا ایک واقعہ جو میراپور اسمبلی کے کسولی بوتھ نمبر 16، جو بجنور لوک سبھا حلقہہے لیکن ضلع مظفر نگر میں آتا ہے، میں بھی پیش آیا۔ اس واقعہ کو ملک کے تمام میڈیا چینل نے بھی دکھایا ہے۔

 

Image result for mayawati and dalits

 

مایاوتی نے کہا کہ اس چوکی پر بی ایس پی کے متعلق پولنگ ایجنٹ نے اپنا خود کا ووٹ ہاتھی کے سامنے والے بٹن کو دباکر ڈالا، تو ووٹ ہاتھی کی جگہ کمل پر پڑا، جس کے سلسلے میں انہوں نے فوراً متعلق بوتھ کے حکام سے شکایت کی۔ اسی وقت وہاں موجود کئی دوسرے ووٹروں نے بھی یہی شکایت کی۔ انہوں نے ووٹ تو ہاتھی میں ڈالا تھالیکن وہ کمل کو جا رہا تھا۔ بوتھ میں موجود سرکاری مبصرین سے بھی یہ شکایت کی گئی اور انہوں نے یہ تسلیم کیا کہ مشین میں خرابی ہے۔

 

Image result for evm machine

 

سابق وزیر اعلیٰ نے کہا کہ ای وی ایم میں دھاندلی اور دلتوں کو پولیس و انتظامیہ کے دم پر روکنا ایک بہت ہی سنگین معاملہ اور جرم ہے۔ یہ جمہوریت کو قتل کرنے والا کام ہے اور اس بات کی عام چرچہ کئی دنوں سے چل رہی تھی کہ اتر پردیش جہاں بی جے پی کی حکومت ہے، وہاں پولیس اور ضلع انتظامیہ کو کہا گیا ہے کہ پوری ریاست میں جہاں جہاں درج فہرست ذات کے لوگ زیادہ تعداد میں رہتے ہیں وہاں پولیس فورس لگا کر ان کو ووٹ ڈالنے سے روکا جائے اور اس کام کو انجام دینے کے لئے ڈی جی پی کے دفتر کو بھی سرگرم کیا گیا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *