لوک سبھا الیکشن 2019پہلامرحلہ:20ریاستوں کی 91سیٹو ں پرووٹنگ جاری

Share Article
Voting

لوک سبھا انتخابات 2019کے لئے پہلے مرحلے میں جمعرات کو سخت سیکورٹی کے درمیان 20 ریاستوں کے 91 انتخابی حلقوں میں پولنگ شروع ہو گئی۔بتادیں کہ 17ویں لوک سبھاانتخابات ہورہے ہیں۔پہلے مرحلے کی ووٹنگ میں 20 ریاستوں کی 91 سیٹوں پر ووٹر اپنے حق رائے دہی کا استعمال کر رہے ہیں۔پولنگ صبح سات بجے شروع ہوئی۔بیشترحلقوں میں پولنگ شام چھ بجے تک چلے گی، لیکن نکسل متاثرہ علاقوں میں سیکورٹی وجوہات کے سبب کہیں تین بجے تو کہیں چار بجے تک ووٹ ڈالے جا سکیں گے۔ 91 لوک سبھا سیٹوں پر کل 1279 امیدوار انتخابی میدان میں ہیں۔

قابل ذکرہے کہ جن 20ریاستوں کے 91سیٹوں پرپہلے مرحلے میں ووٹ ڈالے جارہے ہیں۔وہ ہیں :آندھرا پردیش (25 سیٹیں)، اروناچل (2 سیٹیں) آسام (5سیٹیں) بہار (4 سیٹیں) چھتیس گڑھ (1 سیٹ) جموں و کشمیر (2 نشستیں)، مہاراشٹر (1 سیٹ)، میگھالیہ (1 سیٹ)، میزورم (1 نشست)، اڑیسہ (4 سیٹیں)، سکم (1 سیٹ)، تلنگانہ (17 سیٹیں) تریپورہ (1 سیٹ)، اتر پردیش (8 سیٹیں)، اتراکھنڈ (5 نشستیں)، مغربی بنگال (2 سیٹیں)، انڈمان نکوبار (1 سیٹ)، لکش دیپ (1 سیٹ)

پہلے مرحلے میں بھارتیہ جنتا پارٹی (BJP) کے کئی بڑے لیڈروں کی ساکھ داؤ پر لگا ہے۔ پہلے مرحلے کی پولنگ میں جن اہم رہنماؤں کی قسمت ا ی وی ایم میں قید ہو جائے گی۔ ان میں مرکزی وزیر جنرل (ریٹائرڈ) وی کے سنگھ، نتن گڈکری، ہنس راج اہیر، کرن رجیجو، کانگریس کی رینوکا چودھری، اے آئی ایم کے اسد الدین اویسی شامل ہیں۔

اس مرحلے میں آر ایل ڈی کے اجیت سنگھ کا مقابلہ اتر پردیش میں مظفر نگر سیٹ پر بی جے پی کے سنجیو بالیان سے ہے، جبکہ ان کے بیٹے جینت چودھری باغپت سیٹ پر مرکزی وزیر ستیہ پال سنگھ کو چیلنج کر رہے ہیں۔ ایل جے پی سربراہ اور مرکزی وزیر رام ولاس پاسوان کے بیٹے چراغ پاسوان بہار میں جموئی سیٹ سے امیدوار ہیں۔ پہلے مرحلے میں چھتیس گڑھ کے نکسلی تشدد متاثر بستر سیٹ پر بھی پولنگ ہوگی۔
الیکشن کمیشن نے تمام ریاستوں میں پولنگ پرامن اور منصفانہ طور پرکرانے کے لئے سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے ہیں۔ ووٹنگ کے لئے ایک لاکھ 70 ہزار پولنگ مرکز بنائے گئے ہے۔لوک سبھا انتخابات کے پہلے مرحلے کی پولنگ میں 14 کروڑ 20 لاکھ 54 ہزار 978 رائے دہندگان اپنے ووٹ کے حق کااستعمال کرکے 1279 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *