مغربی بنگال میں نئے گورنر کی تقرری کو لے کر بحث تیز

Share Article

 

مغربی بنگال کے گورنرکیشری ناتھ ترپاٹھی کی 5 سال کی مدت کارجولائی ماہ میں مکمل ہونے جا رہی ہے۔ ان کی جگہ پر کسے نیا گورنر مقرر کیا جائے گا، اسے لے کر بحث تیز ہو گئی ہے۔ خاص بات یہ ہے کہ گزشتہ5 سالوں کے دوران گورنرکیشری ناتھ ترپاٹھی نے بنگال کے دانشوروں کے درمیان اپنی خاص شناخت بنائی ہے۔ ایک موثر ایڈمنسٹریٹر ہونے کے ساتھ ساتھ ادب اور شاعری لکھنے کے میدان میں ماہر ہونے کی وجہ سے ریاست کے ثقافتی گلیاروں میں بھی انہوں نے اپنی خاص موجودگی درج کرائی ہے۔ اپنی مدت کارکے دوران حکمراں ترنمول کانگریس کے ساتھ کئی بار ان کا تصادم بھی سطح پر آیا ہے لیکن آئینی دائرے میں انہوں نے عزت کا خیال رکھتے ہوئے تمام مسائل کو قریب سے سمجھا اور اسے حل کیا۔اب جبکہ جولائی میں ان کی مدت کار ختم ہو رہی ہے تو یہ بحث تیز ہو گئی ہے کہ آخر ان کی جگہ پر گورنر کے عہدے پر کسے مقرر کیا جائے گا؟

 

ویسے مرکزی حکومت کے ذرائع کے حوالے سے خبر ہے کہ آئندہ چند ماہ کے اندر کئی ریاستوں کے گورنروں کی مدت مکمل ہونے جا رہی ہے اور ان کی جگہ کسی نئے چہرے کو مقرر کرنے میں مرکزی حکومت دلچسپی دکھا رہی ہے۔ لیکن مغربی بنگال کی الگ بات ہے۔ خبر ہے کہ کیشری ناتھ ترپاٹھی کی مدت کاربڑھا ئی جا سکتی ہے۔ گورنر نے ریاست میں ایک علاقائی پارٹی کی حکومت ہونے کے باوجود ریاست کے قانون سمیت دیگر مسائل پر ہر وقت فوری نوٹس لے کر کارروائی کی ہے۔ خبر ہے کہ 23 جولائی کو کیشری ناتھ ترپاٹھی کی مدت کار مکمل ہونے سے پہلے مرکزی حکومت ان کی میعاد بڑھانے پر غور کر سکتی ہے۔ ویسے کچھ غیر مصدقہ ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ کیشری ناتھ کی جگہ کلراج مشرا کو مغربی بنگال کا گورنر بنانے پر بات چل رہی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *