کوہلی پالی امریگر ایوارڈ سے سرفراز، بیسٹ بننا چاہتے ہیں

Share Article

Virat-Kohliنئی دہلی: ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان وراٹ کوہلی اور اسٹار اسپن گیند باز روی چندرن اشون کو سیشن میں ان کی شاندار کارکردگی کے لئے بی سی سی آئی کی سالانہ ایوارڈ تقریب 2017 میں سرفراز کیا گیا۔ کوہلی کو سال 2015-16 کے بہترین بین الاقوامی کھلاڑی کے لئے پالی امریگر اعزاز سے نوازہ گیا۔ کوہلی تیسری بار یہ اعزاز حاصل کرنے والے پہلے کھلاڑی بن گئے ہیں۔

بنگلور میں منعقد تقریب میں آر اشون کو بھی اس سیشن میں شنادار کارکردگی اور ویسٹ انڈیز میں 2016 کی کارکردگی کے لئے سی کے نائیڈو ایوارڈ دیا گیا۔ اشون نے چار ٹیسٹ میچوں میں 17 وکٹ حاصل کئے تھے۔ ایوارڈ حاصل کرنے کے بعد کوہلی نے کہا کہ ان کے لئے گزشتہ 10 سے 12 مہینے شاندار رہے۔ اس موقع پر انھوں نے کہا کہ میں اس سے پریشان نہیں ہوتا کہ کون کیا سوچ رہا ہے، ڈریسنگ روم میں بھی یہی سوچ بنی ہے۔ ہم نے ساتھ میں جیتنا اور ہارنا سیکھا ہے۔ کپتان کوہلی نے کہا کہ میں تمام فارمیٹس میں بہترین بننا چاہتا ہوں۔ کوہلی نے ٹیم کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ساتھی کھلاڑیوں کے تعاون کے بنا یہ ممکن نہیں ہو سکتا۔ جس وقت آپ بہتر نہیں کر پاتے اس وقت آپ کے معاون ٹیم کے لئے محاذ سنبھالتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ سبھی نے اپنی صلاحیتوں سے یہ ثابت کیا ہے کہ کیوں ہم دنیا کی بہترین ٹیم ہیں۔ اس کے ساتھ ہی انھوں نے اپنے معاون کھلاڑیوں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ان کے بھروسہ اور کوششوں کے  بنا تیسری بار یہ اعزاز حاصل کرنا ممکن نہیں تھا۔

نقادوں کو جواب دیتے ہوئے کوہلی نے کہا کہ کریئر کے شروعات دنوں سے لے کر آج کئی لوگ میری کارکردگی اور صلاحیتوں پر سوال اٹھاتے آئے ہیں، لیکن میں خود پر بھروسہ رکھتا ہوں، میرا ہمیشہ سے ماننا ہے کہ اگر میں روز 120 فیصد محنت کرتا ہوں تو مجھے کسی کو کوئی جواب دینے کی ضرورت نہیں ہے۔ کوہلی نے کپتانی اور ٹیم کی قیادت کرنے کی ذمہ داری دینے کے لئے بی سی سی آئی کا بھی شکریہ ادا کیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *