کیلاش وجے ورگیہ نے ٹوئٹ کرکے لوک سبھا انتخابات لڑنے سے کیا انکار

Share Article

 

بھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی جنرل سکریٹری اور مغرب بنگال کے پارٹی امور کے انچارج کیلاش وجے ورگیہ نے لوک سبھا انتخابات لڑنے سے انکار کر دیا ہے۔

 

بدھ کو ٹویٹ کرکے کیلاش وجے ورگیہ نے الیکشن نہیں لڑنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ہم سب کی ترجیح خوشحال بھارت کیلئے نریندر مودی کو دوبارہ وزیر اعظم بنانا ہے۔ اس سے پہلے سمترا مہاجن بھی اندور سے الیکشن لڑنے سے انکار کر چکی ہیں۔ جس کے بعد کیلاش وجے ورگیہ کو وہاں سے بڑا چہرہ مانا جا رہا تھا، لیکن اب انہوں نے نے بھی انتخابات لڑنے سے انکار کر دیا ہے۔

 


 

کیلاش وجے ورگیہ نے ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا ‘اندور کے عوام، کارکن اور ملک بھر کے بہی خواہوں کی خواہش ہے کہ میں لوک سبھا انتخابات لڑوں، پر ہم سب کی ترجیح خوشحال بھارت کیلئے نریندر مودی کو دوبارہ وزیر اعظم بنانا ہے۔مغربی بنگال کے عوام مودی جی کے ساتھ کھڑے ہیں، میرا بنگال میں رہنا فرض ہے، اس لئے میں نے الیکشن نہ لڑنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ کیلاش وجے ورگیہ نے کارکنان سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ‘امید ہے کہ آپ بھی ملک کے مفاد اور پارٹی مفاد میں میرے فیصلے سے متفق ہوں گے اور پارٹی جنہیں بھی امیدوار بنائے گی ، ان کی جیت کے لیے، جی جان سے جٹ جائیں گے۔ میری نہ صرف اندور بلکہ پورے ملک کے ووٹروں سے التجا ہے کہ این ڈی اے جیسی مضبوط حکومت اور مودی جی جیسے مضبوط پی ایم کے لئے ووٹ کریں۔
آگے وجے ورگیہ نے کہا کہ ‘BJP کے ہر کارکن کا اصول ہے پہلے وطن،پھر پارٹی اور آخرمیں اپنی ذات۔ جہاں سوال ملک کے مفاد اور پارٹی مفاد کا ہو خود کی کوئی اہمیت نہیں رہ جاتی۔ ہمارے سامنے مغربی بنگال میں پارٹی کوزیادہ سے زیادہ سیٹیں جتانے کا مقصد ہے، یہ ہدف جتنا بڑا ہے اتنا ہی بڑا چیلنج بھی ہے ۔

 

 

کیلاش وجے ورگیہ کے ذریعہ لوک سبھا انتخابات نہیں لڑنے کا اعلان کرنے پر کانگریس ریاستی صدر کمل ناتھ کے میڈیا کوآرڈینیٹر نریندر سلوجا نے جوابی حملہ کیا ہے۔ نریندر سلوجا نے ٹویٹ کرکے کہا ہے ‘تائی لیٹر کے بعد کیلاش وجے ورگیہ نے بھی ٹکٹ نہیں ملتا دیکھ لکھا کہ میں الیکشن نہیں لڑنا چاہتا ہوں۔ یہ سب پہلے دن کیوں نہیں لکھا ایک دن پہلے تک تو کہہ رہے تھے کہ بنگال کاچیلنج بڑا ہے لیکن پارٹی کہے گی تو لڑوں گا۔ تائی کے خط کے بعد اب یہ ٹوئٹ آپ کہنا چاہتے ہے کہ میں نے ہی انکار کر دیا ۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *