جموں کشمیر: وادی میں 17 ٹیلی فون ایکسچینج شروع، 35 علاقوں میں پابندیوں میں نرمی

Share Article
Jammu and Kashmir: 17 telephone exchanges started in Valley, easing restrictions in 35 areas

جموں و کشمیر میں حالات آہستہ آہستہ معمول پر آرہے ہیں۔ وادی کشمیر کے 35 علاقوں میں پابندیوں میں ہفتہ سے نرمی دی گئی ہے اور 17 ٹیلی فون ایکسچینج کے کام کو بحال کر دیا گیا ۔ اس کے علاوہ عوامی گاڑیوں کی خدماتکو بھی بحال کر دیا گیا ہے۔ یہ اطلاع جموں وکشمیر کے پرنسپل سکریٹری روہت کنسل نے ہفتہ کے روز یہاں ایک پریس کانفرنس کے دوران دی۔

قابل ذکر ہے کہ وادی کشمیر کے کچھ حصوں میں جہاں ایک طرف فون خدمات بحال کر دی گئی ہیںوہیں جموں میں جمعہ کی دیر رات سے ٹو جی اسپیڈ کے ساتھ انٹرنیٹ سروس کو شروع کیا گیا ہے۔ جموں وکشمیر میں گذشتہ 5 اگست کو آرٹیکل 370منسوخ کئے جانے کے بعد موبائل و انٹرنیٹ خدمات منسوخ کر دی گئی تھیں۔ جبکہ صرف جموں ڈویژن کے کچھ اضلاع میںہی ٹیلی فون اور موبائل خدمات کو بحال رکھا گیا تھا۔

جموں کے علاوہ سامبا، کٹھوعہ، اودھم پورمیں ٹو جی اسپیڈ کے ساتھ انٹرنیٹ سروس شروع کر دی گئی ہے جبکہ راجوری علاقہ میں بھی پابندیوں میں نرمی دی گئی ہے۔ راجوری میں دفعہ ۔144کے تحت رات نو بجے سے صبح پانچ بجے تک ہی پابندی رہے گی۔ راجوری ، پونچھ، ڈوڈہ ، رام بن اور کشتواڑ اضلاع میں انٹرنیٹ سروس پر لگی روک اب بھی جاری ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *