سعودی بحری جہازوں پرحملے میں ایران نواز ملیشیائوں کا ہاتھ ،امریکہ نے نیا شوشہ چھوڑا

Share Article

 

امریکہ نے گزشتہ روزایک بیان میں کہا ہے کہ امریکہ کی نیشنل سیکورٹی ایجنسی کو یقین ہے کہ چند روز قبل متحدہ عرب امارات کے قریب سمندر میں تیل بردار بحری جہازوں پر تخریب کاری کے حملے کے پیچھے ایران نواز عناصر کا ہاتھ ہے۔

 

Image result for Iran militias' hand over Saudi ships, the US left a new show

واضح رہے کہ ان دنوں امریکہ اور ایران کے درمیان زبر دست کشیدگی کا ماحول ہے اور امریکہ نے ایران کے خلاف متعدد نئی اقتصادی پابندیاں بھی عائد کر دی ہیں جس کی وجہ سے ایران کو مزید مشکلات کا سامنا ہے۔امریکہ نے حالیہ حملے کا رخ فوری طور پر بغیر کسی تحقیقات کے ایران کی طرف موڑ دیا ہے جس سے خطہ میں کشیدگی کے آثار پیدا ہو گئے ہیں۔اب تک سعودی عرب نے بھی کسی گروہ کی جانب انگلی نہیں اٹھائی ہے لیکن امریکہ نے ایران کا نام اچھال کر سعودی عرب اور ایران کے درمیان چلے آرہے تنازعات کو بھڑکانے کی کوشش کی ہے ۔

 

Image result for Iran militias' hand over Saudi ships, the US left a new show

العربیہ کے مطابق امریکی حکومت کے ایک سینئر عہدیدار نے کہا کہ اس بات کے قوی امکانات موجود ہیں کہ چند روز قبل امارات کے قریب دو سعودی، ایک اماراتی اور ایک ناروے کے بحری جہازپر حملوں میں ایران کے حامی جنگجو گروپ ملوث ہیں۔خیال رہے کہ اماراتی وزارت خارجہ نے اتوارکے روز بتایاتھا کہ مشرقی ساحل کے قریب الفجیرہ ریاست سے ملحقہ عالمی پانیوں میں سعودی عرب سمیت متعدد دیگر ملکوںکے بحری جہازوںپرحملہ کیا گیا جس کے نتیجے میں تیل بردار جہازوں کو نقصان پہنچا ہے۔اماراتی حکومت کاکہنا ہے کہ وہ سمندر میں بحری جہازوں پر ہونے والے حملے کی تحقیقات کررہے ہیں۔ تحقیقات میں ابوظہبی کو دوسرے ملکوںکی طرف سے بھی تعاون حاصل ہے۔ادھر سعودی عرب کے وزیر برائے پٹرولیم انجینئرخالد الفالح نے بھی سوموار کے روز امارات کے علاقائی حدود میں دو سعودی بحری جہازوں کو حملوں کا نشانہ بنائے جانے کی تصدیق کی تھی۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *