بھارت کا اندرونی معاملہ ہے کشمیر: راہل گاندھی

 

مرکز کی نریندر مودی حکومت کے ہر فیصلے پر سوال کھڑا کرنے والے راہل گاندھی آج پہلی بار حکومت کے ساتھ متفق نظر آ رہے ہیں۔ ایسا اس لئے نہیں کہ راہل کا دل بدل گیا ہے، بلکہ اس لئے کہ اقوام متحدہ کو بھیجی گئی اپنی تجویزمیں پاکستان نے راہل کے بیان کو ہی بنیاد بنا لیا ہے۔ اس سے ملک بھر میں راہل کی فضیحت ہو رہی ہے۔اس کے پیش نظر بدھ کے روز اپنے ٹویٹس کے ذریعے راہل گاندھی نے کشمیر معاملے پر مرکزی حکومت کی حمایت کی ہے۔

اپنے ٹویٹ میں راہل گاندھی نے لکھا،’میں اس حکومت سے کئی مسائل پر متفق نہیں ہوں لیکن میں یہ واضح کر دینا چاہتا ہوں کہ کشمیر بھارت کا اندرونی معاملہ ہے۔ اس میں مداخلت کرنے کے لئے پاکستان یا کسی دوسرے ملک کے لئے کوئی جگہ نہیں ہے‘۔

کشمیر میں تشدد کے لئے پاکستان کو ذمہ دار ٹھہراتے ہوئے راہل نے ایک اور ٹویٹ کیا، جس میں انہوں نے لکھا، ’جموں و کشمیر میں تشدد ہو رہا ہے۔ یہاں تشدد پاکستانکے ذریعہ مشتعل کئے جانے اور اس کی حمایت سے ہو رہے ہیں۔ دنیا بھر میں پاکستان کی شناخت دہشت گردی کو فروغ دینے والے ملک کے طور پر ہے‘۔

قابل ذکر ہے کہ پاکستان کے ذریعہ کشمیر کو لے کر اقوام متحدہ کو لکھے گئے خط میں راہل گاندھی کے بیانات اور ٹویٹس کا ذکر کیا گیا تھا جس کے بعد آج راہل نے مسلسل دو ٹویٹ کر کشمیر پر اپنی وضاحت پیش کی ہے۔ فی الحال راہل گاندھی اپنے پارلیمانی حلقہ وائناڈ کے دورے پر ہیں، جہاں وہ سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا جائزہ لینے کے ساتھ لوگوں کا حال چال جان رہے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *