سا برمتی ریور فرنٹ ، احمد آباد میں’ہنر ہاٹ‘ کا افتتاح

 

مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے آج یہاں کہا کہ “ہنر ہاٹ” ہندوستانی دستکاری- شلپکاری کے ختم ہو رہے ’شاندار ورثہ‘ کو جاندار بنانے کی ایک مضبوط مہم ہے۔ نقوی نے 07 سے 15 دسمبر 2019 تک سابر متی ریور فرنٹ ، احمد آباد میں منعقدہ “ہنر ہاٹ” کا افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ ایک طرف ، “ہنر ہاٹ” سے ” ہنر کے استاد ” دست کاریـ ــــ ، شلپ کاریـــ کیــ حوصلہ افزائی سے “ہنر کو حوصلہ” ملا ہے وہیں دوسری طرف بڑی تعداد میں ہزاروں کاری گروں ، خانسامائوں اور ان سے وابستہ ہزاروں افراد کو روزگار اور روزگار کے موا قع میسر آئے ہیں ، جن میں خواتین بھی بڑی تعداد میں شامل ہیں۔نقوی نے کہا کہ ملک کی مختلف ریاستوں میں مشہور مقامات پر منعقد ہونے کی وجہ سے ، ’ہنر ہاٹ‘ کاریگروں ، اور دیگر نوادرات کی ہاتھ سے تیار نایاب مصنوعات کی زبردست فروخت کررہا ہے اور ان کاریگروں ، کو نہ صرف ملک سے بلکہ بیرون ملک بھی آرڈر مل رہے ہیں۔ “ہنر ہاٹ” دستکاروں- شلپکاروں کا ایک ” امپاورمنٹ ایکسچینج” ثابت ہوا ہے۔

نقوی نے کہا کہ مودی سرکار- 2 کے پہلے 100 دن کے اندر ، وزارت اقلیتی امور نے ملک کے مختلف حصوں میں 100 “ہنر مراکز” کو منظوری دے دی ہے۔ ان “ہنر مندوں” میں ، دستکاری ، شلپکاری ، روایتی باورچیوں کو موجودہ تقاضوں کے مطابق تربیت دی جائے گی۔ اس کی مہارت میں مزید اضافہ ہوگا۔ اگلے 5 سالوں میں ، “ہنر ہاٹ” کے ذریعہ ، مودی حکومت لاکھوں ” ہنر کے استاد ” کاریگروں ، دستکاروں- شلپکاروں اور روایتی باورچیوں کو روزگار اور روزگار کے مواقع فراہم کرے گی۔ نقوی نے بتایا کہ اگلی “ہنر ہات” کا انعقاد 20 سے 31 دسمبر 2019 کو ممبئی میں ، پھر لکھنؤ میں 10 سے 20 جنوری 2020 ، حیدرآباد میں 11 سے 19 جنوری 2020 ، چندی گڑھ میں 20 جنوری سے 1 فروری 2020 تک ہوگا۔ یہ 08 فروری سے 16 فروری 2020 تک اندور میں کیا جائے گا۔

نقوی نے کہا کہ احمد آ باد میں منعقد کئے جارہے “ہنر ہاٹ” میںخواتین کاریگروں سمیت تقریباً ملک کی تمام ریاستوں کے کاریگروں ، دستکاروں اور باورچیوں کی بڑی تعداد حصہ لے رہی ہیں۔ دستکاری اور ہینڈلوم کی شاندار مصنوعات آسام ، آندھراپردیش ، گجرات ، کیرالہ ، جموں و کشمیر ، جھارکھنڈ ، پنجاب ، راجستھان ، یوپی ، مغربی بنگال ، بہار ، منی پور ، تلنگانہ ، تمل ناڈو وغیرہ ریاستوں سے کاریگر لائے گئے ہیں۔ اس کے علاوہ ، اتر پردیش میں غائب ہورہا ٹیکھو فن پہلی بار احمد آباد کے “ہنر ہاٹ” میں شامل کیا جارہا ہے۔ کیرالہ کے ناریل کے شیل مصنوعات کو بھی پہلی بار نمائندگی مل رہی ہے۔ کرناٹک سے روز ووڈ کی طرف سے تیار کردہ آرٹ ورک بھی توجہ کا مرکز ہوگا۔ یہاں آنے والے لوگ ملک کی مختلف ریاستوں کے روایتی اور مزیدار پکوان سے بھی لطف اٹھائیں گے۔ اس کے علاوہ روایتی رقص ، موسیقی ، لوک گیت ، قوالی اور دیگر ثقافتی پروگرام ملک کے مشہور فنکاروں کے ذریعہ روزانہ پیش کیا جاتا ہے جو لوگوں کی توجہ کا مرکز ہوگا۔ مشہور فنکار ، مزاح نگار ، گلوکار وغیرہ جیسے صابری برادرز ، تر نم ملک ، ریکھا راج ، راہول جوشی ، اشونی کمار ، مکی سنگھ نارولا ، مکیش پنچولی ، ترپتی مہر شاہ اپنے پروگرام پیش کریں گے۔ آنے والے دنوں میں ، گروگرام ، بنگلورو ، چنئی ، کولکتہ ، دہرادون ، پٹنہ ، بھوپال ، ناگپور ، رائے پور ، پڈوچیری ، امرتسر ، جموں ، شملہ ، گوا ، کوچی ، گوہاٹی ، رانچی ، بھوبنیشور ، اجمیر وغیرہ میں “ہنر ہاٹ” کا اہتمام کیا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *