کشمیر معاملے پر عمران خان نے اردن کے شاہ اور میکروں سے کی بات چیت

Share Article
Imran Khan called to Jordanian King & French President to discuss situation in IOK

پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے کشمیر مسئلے پر بدھ کے روز اردن کے شاہ کنگ عبد اللہ دوئم اور فرانس کے صدر امینوئل میکروں سے فون پر بات چیت کی۔

نیوز چینل جیو نیوز کے مطابق کنگ عبد اللہ کو کشمیر معاملے پر بحث کرتے ہوئے انہیں بھارت کی غیر قانونی اور جابرانہ پالیسیوں کے بارے میں معلومات دی۔ انہوں نے کہا کہ اس سے نہ صرف سنگین انسانی بحران پیدا ہوا ہے، بلکہ اس علاقے میں امن اور سلامتی بھی خطرے میں پڑ گئی ہے۔ بھارت اپنی یکطرفہ اور فاشسٹ کارروائیوں کے ذریعے متنازعہ علاقے میںآبادی کی تبدیلی کی کوشش کر رہا ہے جو بین الاقوامی ضوابط اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کی خلاف ورزی ہے۔

عمران خان نے کہا کہ بین الاقوامی برادری کو ہندوستانی زیادتیوں پر توجہ دینی چاہئے اور جموں و کشمیر کے مظلوم لوگوں کے لئے آواز بلند کرنی چاہئے۔ کنگ عبداللہ نے کہا کہ وہ کشمیر کے واقعات پر قریب سے نظر رکھ رہے ہیں۔ انہوں نے بات چیت کے ذریعے مسئلہ کشمیر کے پرامن حل پر زور دیا اور کہا کہ اردن کشمیر کے حالات پر دیگر ممالک سے مشاورت کرے گا۔

عمران خان نے فرانس کے صدر سے بھی اس معاملے پر بات کی۔ ساتھ ہی وادی میں موجودہ صورت حال کے بارے میں معلومات دی۔ خان نے وادی میں متنازعہ حیثیت اور اس کی آبادی کی ساخت کو تبدیل کرنے کے لئے بھارت کی طرف سے اٹھائے گئے غیر قانونی اور یکطرفہ اقدامات پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے کہا کہ یہ قدم کشمیر اور بین الاقوامی قانون پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے خلاف ہے۔

عمران خان نے فرانسیسی صدر کو وادی میں لوگوں کے بنیادی انسانی حقوق اور تحفظ کی بگڑتی صورت حال سے آگاہ کیا جہاں 5 اگست سے کرفیو نافذ ہے۔ فرانس کے صدر نے پرامن طریقوں کے ذریعے تمام متنازعہ مسائل کو حل کرنے کی اہمیت پر زور دیا۔ دونوں ممالک نے خطے میں امن اور استحکام کے لئے مل کر کام کرنا جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *