آئی جی عبدالرحمن کی تصنیف کردہ’’انکار اور محرومی‘‘کتاب کا اجراء

Share Article

 

مسلمانوں کی پسماندگی کو دور کرنا صرف حکومت کی ہی نہیں ملک کے مسلم لیڈران کی بھی ذمہ داری ہے:سراج انصاری

سچر کمیٹی اور رنگناتھ مشرا کمیٹی کی رپورٹ تمام ہو چکی ہے اور ان دونوں رپورٹ میں ہندوستان کے مسلمانوں کی پسماندگی ، تعلیم ، کاروبار اور ملک کے دوسری اقلیتی قوم کے ساتھ آج سے ۱۲؍ سالوں پیچھے مسلمان کتنا پچھڑا ہواتھا۔ اس پر رپورٹ آئی تھی۔ لیکن ان دونوں رپورٹ پر مسلمانوں کی پسماندگی کو دور کرنے کے لئے کوئی بھی کارگر قدم نہیں اٹھائے گئے۔ ان دونوں رپورٹ پر مہاراشٹر کے سینئر آئی پی ایس اور موجودہ حکومت مہاراشٹر ہیومن رائٹ کمیشن کے اسپیشل آئی جی عبدالرحمٰن نے سچر کمیٹی اور رنگناتھ مشرا کمیٹی کی رپورٹ پر گزشتہ ۴؍ سال سے مختلف اثرات اور مسلمانوں کے حالات پر ایک تحقیقاتی کتاب انگریزی میں ’’Denial Deprivation‘‘ (انکار اور محرومی) شائع کی ہے۔ گزشتہ فروری میں یہ کتاب منظر عام پر آئی۔ اس کے بعد اس کتاب کو خاص کر مسلمانوں کے دانشوروں تک پہنچانے کے لئے عبدالرحمٰں اسپیشل آئی جی نے مہاراشٹر کے مختلف شہروں میں کتاب کے تعارف اور مقاصد کو لے کر پروگرام منعقد کئے۔ اس سلسلے کی ایک کڑی میں ممبئی سے قریب گنجان مسلم آبادی والے شہرممبرا میں بھی ایک پروگرام کے ذریعے اس کتاب سے شہر کے دانشوروں کے ساتھ عام لوگوں تک اپنی کتاب کو پہنچانے کے لئے ممبرا شہر کے اسدا ﷲخان اسکول میں پروگرام منعقد کیا تھا۔ اس پروگرام میں مہاراشٹر ہیومن رائٹ کمیشن کے اسپیشل آئی جی اور کتاب کے مصنف عبدالرحمٰن نے کہا کہ پچھلے ۱۲؍ سالوں سے یہ دونوں رپورٹ منظر عام ہوئی ہے۔ سچر کمیٹی اور رنگناتھ مشرا کمیٹی کی سفارشوں کو عمل میں لایا۔ سابق اور موجودہ حکومت کا فرض تھا۔ مسلمانوں کی پسماندگی کو دور کرنا صرف حکومت کی ہی نہیں ملک میں موجود مسلم لیڈران کو چاہے وہ مذہبی یا سیاسی ہوں کے ساتھ ساتھ مسلمانوں کے اس طبقے کے سامنے آنا چاہئے جو قوم میں اپنے موجودہ وسائل سے تعلیم و روزگار کے میدان میں مدد کر سکتے ہیں۔ صرف حکومت کے بھروسے پر نہ رہ کر اپنی مدد آپ کرنا ہوگا۔ اس پروگرام میں مہمانِ خصوصی ممبراکے سینئر وکیل ایڈوکیٹ شمیم احسن ، ڈاکٹر ایم ایچ انصاری، ایڈوکیٹ کلیدار، اسداﷲخان، پروفیسر نجم الحسن، سراج انصاری وغیرہ موجود تھے۔ اس پروگرام کو کامیاب کرنے میں ایڈوکیٹ عادل مودی، ایڈوکیٹ شفیق احمد، حضرت ابو ایوب انصاری فائونڈیشن کے صدر سراج انصاری وغیرہ نے اہم کردار ادا کیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *