حماس کی قیادت کے دورہ روس کا مقصد دوطرفہ تعلقات کو مزید مضبوط کرنا ہے
 
اسلامی تحریک مزاحمت’حماس‘کے سیاسی شعبے کے سینری رکن ڈاکٹر موسیٰ ابو مرزوق کی قیادت میں جماعت کا ایک اعلیٰ اختیاراتی وفد سوموار کو روس کے دورے پرماسکو پہنچ گیا۔ فلسطینی میڈیا رپورٹ کے مطابق حماس کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ روس کے دورے پر ماسکو پہنچنے والے جماعت کے وفد کی قیادت ڈاکٹر موسیٰ ابو مرزوق کررہے ہیں۔ وفد میں سیاسی شعبے کے رکن حسام بدران اور دیگر رہ نما شامل ہیں۔
Image result for Hamas delegation to Moscow
حماس کی طرف سے جاری بیان میںکہا گیا ہے کہ حماس کی قیادت کے دورہ روس کا مقصد دوطرفہ تعلقات کو مزید مضبوط کرنا ہے۔ اس دورے کا فلسطینیوں کے درمیان مصالحتی عمل کے ساتھ کوئی تعلق نہیں۔خیال رہے کہ حماس کی قیادت اور روس کیدرمیان دوستانہ تعلقات قائم ہیں۔ حماس کی قیادت کا یہ پہلا دورہ روس نہیں بلکہ اس سے قبل بھی جماعت کی قیادت وقتا فوقتا ماسکو کادورہ کرتی رہتی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here