سہارا انڈیا کے سرمایہ کاروں کا پیسہ واپس دلانے کے لئے حکومت کرے گی کارروائی

Share Article

 

بہار اسمبلی میں نائب وزیر اعلیٰ اور وزیر خزانہ سشیل کمار مودی نے اعلان کیا کہ سہارا انڈیا کے خلاف ایف آئی آر درج کرا کر سرمایہ کاروں کا پیسہ حکومت واپس دلائے گی۔ کمار سروجیت کے قلیل نوٹس کا پیر کو اسمبلی میں جواب دیتے ہوئے سشیل کمار مودی نے کہا کہ سہارا انڈیا کے سرمایہ کاروں کا پیسہ پختہ ہو جانے کے باوجود لوٹایا نہیں جا رہا ہے اور دوبارہ سے سرمایہ کاری کرنے کے لئے انہیں پابند کیا جا رہا ہے۔

Image result for Government will take action to repay Sahara India's investors' money

انہوں نے کہا کہ سہارا انڈیا کے خلاف ایف آئی آر کرا کر سرمایہ کاروں کا پیسہ حکومت واپس دلائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ادا نہیں کئے جانے کی صورت میں سہارا انڈیا کمپنی کے خلاف بہار کے سرمایہ داروں کے مفادات کا تحفظ ایکٹ 2002 کے نظر ثانی ایکٹ 2013 اور 2017 کے تحت کارروائی کرنے کے لئے تمام ضلع عہدیداروں کو ہدایت دی گئی ہے۔

 

وزیرخزانہ نے اپنے جواب میں کہا کہ سہارا انڈیا کریڈٹ کمپنی لمیٹڈ، یونیورسل سہاراانڈیا ملٹی پرپز کوآپریٹو سوسائٹی اور ہمارا انڈیا کریڈٹ کوآپریٹو سوسائٹی سہارا گروپ کی ان تینوں کمپنیوں کے ذریعے موجودہ میں جمع کرنے والوں سے سرمایہ کاری کے لئے رقم حاصل کی جا رہی ہے۔ یہ تینوں سوسائٹی مرکزی رجسٹرار آف کوآپریٹو سوسائٹی زراعت اور کوآپرٹیوز حکومت ہند سے منسلک ہے اور سرمایہ کاروں کی رقم ادا کرنا ان سوسائٹی کے ہی ذمہ ہے۔

 

انہوں نے کہا کہ اس میں تیسری پارٹی کا کردار نہیں ہے۔ اس کے باوجود بہار حکومت اپنی سطح سے بھی سرمایہ کاروں کی جمع پونجی واپس کرنے کے لئے بہار کے جمع کرنے والوں کے مفادات کا تحفظ ایکٹ کے تحت مکمل کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔ سرمایہ کاروں سے مسلسل مل رہی شکایات کا ذکر کرتے ہوئے سشیل مودی نے کہا کہ سہارا کے خلاف پختہ رقم کی ادائیگی کے سلسلے میں بہار کے تمام اضلاع میں شکایات موصول ہو رہی ہیں مگر زیادہ تر شکایات پٹنہ ضلع میں ہی ملی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پٹنہ ضلع میں 3556 سرمایہ کاروں کی طرف پختہ رقم کی ادائیگی کیلئے درخواست کی گئی ہے، جن میں سے 1983 مقدمات میں 18 کروڑ 36 لاکھ 51 ہزار 566 روپے کی ادائیگی کی جا چکی ہے۔

 

پورنیہ ضلع میں 13 لاکھ 76 ہزار 590 اور چھپرا ضلع میں چار لاکھ 29 ہزار 600 ادائیگی کئے جانے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ باقی اضلاع سے رپورٹ کی کوشش کی گئی ہے۔سہارا انڈیا میں سرمایہ کاروں کو رقم کی ادائیگی کیلئے متعلقہ اضلاع کے ضلع عہدیداروں کی طرف سے مسلسل سہارا انڈیا کے نمائندوں کے ساتھ جائزہ میٹنگ کی جا رہی ہے اور ادائیگی کرنے کی کوشش کی جارہی ہے ۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *