فحش ویڈیوز بنا کر بلیک میل کرنے پر طالبہ نے لگائی پھانسی

Share Article

suicide-demo

کوٹہ: جواہر نگر تھانہ علاقہ میں ایک نوجوان سے تنگ آکر کوچنگ کی طالبہ نے اتوار رات کو دیر ہوسٹل کے کمرے میں پھانسی کا پھندہ لگا کر اپنی زندگی ختم کر لی۔طالبہ روزو نینس کوچنگ انسٹی ٹیوٹ سے آئی آئی ٹی کی تیاری کر رہی تھی۔پولیس کے مطابق اترپردیش فیروز آباد کے سرماگنج ساکن کوچنگ طالبہ کارتیکا جاہن (18) بیٹی سنجے کوٹہ کے جواہر نگر تھانہ علاقہ کے راجیو نگر میں واقع سائی ناتھ ہوسٹل میں رہ کر روزوننیس کوچنگ انسٹی ٹیوٹ سے آئی آئی ٹی کی تیاری کر رہی تھی۔ جس نے رات کو دیر ہوسٹل کے کمرے میں پنکھے پر لٹک کر اپنی زندگی ختم کر لی۔ ہوسٹل آپریٹر کے واقعہ کی معلومات لگی تو انہوں نے اس کی اطلاع جواہر نگر تھانہ پولیس کو دی۔ واقعہ کی معلومات لگتے ہی تھانہ پولیس نے موقع پرپہنچ کرطالبہ کی لاش کو پھانسی کے پھندے سے نیچے اتارا۔ کمرے کی تلاشی لی جہاں کسی قسم کا سوسائڈ نوٹ نہیں ملا۔ پولیس نے مرنے والی کی لاش کو اایم بی ایس اسپتال کی مورچری میں شفٹ کروایا جہاں صبح رشتہ داروں کے آنے کے بعد طالبہ کی لاش کو پوسٹ مارٹم کرکے لاش اہل خانہ کو سونپا گیا۔
نوجوان پر لگایا غیر قانونی تعلقات بنانے کے لئے فحش ویڈیو وائرل کرنے کا الزام:
ہلاک ہونے والی کوچنگ طالبہ کے ماما سونو کمار نے بتایا کہ ہلاک ہونے والی کرتیکا کو گاؤں میں رہنے والا نشانت ٹھاکر نام کا نوجوان پریشان کیا کرتا تھا۔ جس کی وجہ سے طالبہ کی والدین نے اسے ڈیڑھ ماہ پہلے ہی آگے کی تعلیم کے لئے کوٹہ بھیجا تھا۔ یہاں آنے کے بعد سے نشانت ٹھاکر نے کرتیکا کو دھمکانا شروع کر دیا تھا۔ نوجوان نشانت ٹھاکر طالبہ کرتیکا کی فحش تصویر اور ویڈیو بنانے کی بات کہتے ہوئے اسے واپس گاؤں آنے اور ناجائز تعلقات بنانے کا دباؤ بنا رہا تھا۔ جس کی وجہ سے طالبہ نے پھانسی کا پھندہ لگا کر خود کشی کر لی۔ پولیس نے رشتہ داروں کی رپورٹ پر مقدمہ درج کر تحقیقات شروع کر دی۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *