’ایک مرتبہ استعمال کیاہوا پلاسٹک‘ پر پابندی کی سابق وزیر ماحولیات جے رام رمیش نے کی مخالفت

Share Article

کانگریس کی قیادت والی متحدہ ترقی پسند اتحاد (یو پی اے) حکومت میں وزیر ماحولیات رہے جے رام رمیش نے’پلاسٹ کے ایک مرتبہ استعمال’ پر پابندی عائد کی مخالفت کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ اس سے صرف ملک اور دنیا میں مودی حکومت کی تعریف ہوگی اور اصلیت پوشیدہ رہ جائے گی۔

جے رام رمیش نے ٹوئٹر کا استعمال کرتے ہوئے اپنا احتجاج درج کرایا اور کہا کہ وزیر ماحولیات رہتے ہوئے انہوں نے ایک مرتبہ پلاسٹک کے استعمال پر مکمل پابندی عائد کی مخالفت کی تھی۔ پلاسٹک کی صنعت لاکھوں کو روزگار مہیا کراتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اصل مسئلہ پلاسٹک کے دوبارہ استعمال اوراس مسئلہ کے حل سے جڑا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پلاسٹک پرپابندی ملک اور دنیا میں صرف ہیڈلائن بنے گا۔ وہیں اصل میں مودی حکومت کے ماحولیاتی ریکارڈ کو ڈھک دے گا۔

قابل ذکر ہے کہ مودی حکومت کا منصوبہ ایک مرتبہ استعمال ہونے والی پلاسٹک کی بنی مصنوعات جیسے اسٹرا، کپ، کچھ خاص قسم کے پولی تھن بیگ، لفافے وغیرہ کے استعمال پر پابندی لگانے کا منصوبہ ہے۔پیر کو وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا تھا کہ ان کی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ بھارت آنے والے سالوں میںایک مرتبہ استعمال ہونے والاپلاسٹک کو ختم کر دے گا، ان کا خیال ہے کہ اب وقت آ گیا ہے کہ دنیا بھی پلاسٹک کے استعمال کو الوداع کہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *